Wednesday , August 15 2018
Home / شہر کی خبریں / چیف منسٹر پر آر ٹی سی ملازمین کو دھمکانے کا الزام

چیف منسٹر پر آر ٹی سی ملازمین کو دھمکانے کا الزام

مطالبات کی یکسوئی کیلئے مذاکرات کی تجویز، پروفیسر کودنڈا رام کا بیان
حیدرآباد۔/8 جون، ( سیاست نیوز) تلنگانہ جنا سمیتی نے آر ٹی سی ملازمین کے مطالبات کی مکمل تائید کا اعلان کیا اور الزام عائد کیا کہ حکومت ہڑتال سے روکنے کیلئے آر ٹی سی ملازمین کو دھمکیاں دے رہی ہے۔ جنا سمیتی کے صدر پروفیسر کودنڈا رام نے کہا کہ آر ٹی سی کے موجودہ نقصانات کیلئے حکومت کی پالیسی ذمہ دار ہے۔ 11 جون سے ملازمین کی ہڑتال کی نوٹس کے بعد چیف منسٹر کی جانب سے جاری کردہ بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے کودنڈا رام نے کہا کہ آر ٹی سی ملازمین کے مطالبات پر مذاکرات کئے بغیر چیف منسٹر کی جانب سے دھمکی دینا مناسب نہیں ہے۔ انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ آر ٹی سی کے ڈیزل کے زائد بوجھ کو حکومت برداشت کرے۔ حکومت بارہا آر ٹی سی کو نقصانات کا بہانہ کرتے ہوئے تنخواہوں میں اضافہ سے انکار کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پٹرولیم اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ سے آر ٹی سی کے بوجھ میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ اگر حکومت آر ٹی سی کو نقصانات سے اُبھارنا چاہتی ہے تو اسے ڈیزل کے اضافی بوجھ کو برداشت کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ جنا سمیتی ملازمین کے مطالبات کے ساتھ ہے اور اگر آر ٹی سی ملازمین نے ہڑتال کا فیصلہ کیا تو جنا سمیتی ان کی تائید کرے گی۔ کودنڈا رام نے حکومت پر سخت تنقید کی اور کہا کہ دیگر محکمہ جات کے ملازمین کے ساتھ حکومت کا رویہ ہمدردانہ ہے جبکہ آر ٹی سی ملازمین سے انتقامی رویہ باعث حیرت ہے۔ جب کبھی آر ٹی سی ملازمین نے مطالبات کی یکسوئی پر زور دیا حکومت کی جانب سے ملازمتوں کو برخاست کرنے کی دھمکی دی گئی۔ انہوں نے کہا کہ آر ٹی سی ملازمین سے حکومت کو بات چیت کرتے ہوئے انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر مسائل کی یکسوئی کرنی چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ تحریک کے دورن کے سی آر نے تلنگانہ آر ٹی سی ملازمین کے ساتھ کئی وعدے کئے تھے لیکن اقتدار ملتے ہی وعدوں کو فراموش کردیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ آر ٹی سی ملازمین نے تلنگانہ تحریک میں اہم رول ادا کیا ہے لہذا ان کے مطالبات کو نظر انداز نہیں کیا جاسکتا۔ واضح رہے کہ ملازمین کی جانب سے ہڑتال کی نوٹس کے ساتھ ہی چیف منسٹر نے بیان جاری کرتے ہوئے انتباہ دیا کہ ہڑتال کی صورت میں ملازمین اپنی ملازمتوں سے محروم ہوسکتے ہیں۔ ہڑتال کی صورت میں روزانہ آر ٹی سی کو 4 تا5 کروڑ کا خسارہ ہوگا اس طرح مجموعی خسارہ میں اضافہ ہوگا لہذا حکومت نے آر ٹی سی ملازمین کو ہڑتال سے باز رکھنے کی کوشش کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT