Wednesday , November 22 2017
Home / دنیا / چین : مخالف دہشت گردی قانون منظور‘صیانتی محکموں کو لامحدو د اختیارات

چین : مخالف دہشت گردی قانون منظور‘صیانتی محکموں کو لامحدو د اختیارات

امریکہ کی شدید تنقید ‘ شہری ‘ سماجی اور مذہبی اجتماعات پر پابندی عائد کرنے کا اندیشہ‘ ماضی کے واقعات کا حوالہ
بیجنگ۔27ڈسمبر ( سیاست ڈاٹ کام )  چین نے آج اپنا اولین سخت گیر انسداد دہشت گردی قانون منظور کرلیا جس سے صیانتی محکموں کو لامحدود اختیارات حاصل ہوتے ہیں ۔ قبل ازیں امریکہ خلوت میں مداخلت اور آزادی تقریر کے سلسلہ میں چین پر سخت تنقید کرچکا ہے ۔ عوام کی قومی کانگریس کی مجلس خائمہ میں مسودہ قانون منظور کردیا جو برسراقتدار کمیونسٹ پارٹی آف چائنا کی جانب سے پیش کیا گیا تھا ۔ نیا قانون چین کیلئے ایک نازک وقت پر منظور کیا گیا ہے جب کہ بحیثیت مجموعی پوری دنیا کے لئے بھی یہ ایک نازک وقت ہے ۔ پیرس میں دہشت گرد حملے ‘ روس کے مسافر بردار جٹ طیارہ پر مصر کی فضائی حدود میں حملہ ‘ دولت اسلامیہ انتہا پسند گروپس کی جانب سے یرغمالیوں کو ہلاک کردینے کے واقعہ پر پوری دنیا دہشت گردی کے بڑھتے ہوئے خطرہ کے سلسلہ میں چوکس ہوچکی ہے ۔ سرکاری خبر رساں ادارہ ژن ہوا نے کہا کہ یہ قانون صیانتی محکموں کو حد سے زیادہ اختیارات دیتا ہے ۔

قبل ازیں چین نے ایک اعلیٰ سطحی ملازم پولیس کو نئے انسداد دہشت گردی عنصر کی حیثیت سے مقرر کیا ہے تاکہ تمام صیانتی محکموں خاص طور پر شورش زدہ صوبہ ژن جیانگ کے صیانتی محکمہ کے درمیان روابط و ہم آہنگی میں اضافہ ہوسکے ۔ یہاں فوج القاعدہ کی حمایت یافتہ مشرقی ترکستان اسلامی تحریک سے برسرجنگ ہے ۔ چین نے کہا کہ کئی ای ٹی آئی ایم عسکریت پسند صوبہ ژن جیانگ سے سرحد پار کر کے شام پہنچ چکے ہیں تاکہ دولت اسلامیہ کے شانہ بہ شانہ جنگ کرسکیں ۔ اُن میں سے چند وطن واپس آچکے ہیں تاکہ اپنے ملک کی سرزمین میں حملے کریں ۔ جن ژیانگ ایک شورش زدہ علاقہ ہے جہاں کی اکثریت ایغور مسلم آبادی پر مشتمل ہے ۔ یہاں پر نوآبادکاروں کی تعداد میں اضافہ کی وجہ سے جو ہان برادری کے ارکان میں بے چینی پھیلی ہوئی ہے ۔ انسداد دہشت گردی قانون دیگر صوبوں بشمول تبت پر بھی نافذ ہے جو ماضی میں 120 خودسوزی کے واقعات کا مشاہدہ کرچکا ہے جو صیانتی محکموں کے کنٹرول کے خلاف بطور احتجاج کی گئی تھیں ۔ قبل ازیں چین کے پاس خصوصی انسداد دہشت گردی قانون موجود نہیں تھا ‘ حالانکہ اس سے متعلقہ دفعات مختلف این پی سی مجلس خائمہ کے فیصلوں میں شامل کی گئی تھیں ۔ علاوہ ازیں فوجداری قانون‘ فوجداری طریقہ کار کے قانون اور ہنگامی ردعمل قانون کی دفعات بھی انسداد دہشت گردی سے متعلق ہے۔ چین کے مسودہ قانون پر امریکہ نے سخت تنقید کرتے ہوئے سنگین اندیشے ظاہر کئے ہیں ۔ امریکہ نے کہاکہ ایسا قانون دہشت گردی کے خطرہ کے خلاف اچھا ہونے کے بجائے زیادہ نقصاندہ ثابت ہوگا ۔ امریکہ سے تجارت اور سرمایہ کاری میں کمی آئے گی ۔ امریکہ کے محکمہ خارجہ کی ترجمان گیبرئیل پرائس نے گذشتہ ہفتہ کہا کہ چینی قومی صیانتی قانون جو جاریہ سال منظور کیا گیاہے اور جس میں مجوزہ قانون سازی برائے غیر ملکی این جی اوز موجود ہے۔‘انسداد دہشت گردی کیلئے مفید سے زیادہ مضر ثابت ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے خیال میںانسداد دہشت گردی قانون کے مسودہ کے نتیجہ میں آزادی اظہار ‘ آزادی انجمن سازی ‘ آزادی پُرامن اجتماع اور مذہبی اجتماعات پر پابندیاں عائد کی جائیں گی۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT