Tuesday , July 17 2018
Home / ہندوستان / چیک بکس سے دستبرداری کا کوئی منصوبہ نہیں:وزارت فینانس

چیک بکس سے دستبرداری کا کوئی منصوبہ نہیں:وزارت فینانس

نئی دہلی ۔ /23 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) وزارت فینانس نے آج کہا کہ چیک بکس منسوخ کرنے کا کوئی منصوبہ نہیں ہے ۔ وزارت نے کہا کہ یہ ادائیگیوں کے منظر کا لازمی حصہ ہیں۔ یہ وضاحت ان اطلاعات کے پیش نظر اہمیت رکھتی ہے کہ حیدرآباد کے اردو روزنامہ سیاست اور صحافت کے دیگر گوشوں میں یہ اطلاع دی گئی تھی کہ مرکزی حکومت کی جانب سے بینک چیک بک عنقریب منسوخ کردی جائے گی تاکہ ڈیجیٹل لین دین کو فروغ دیا جاسکے لیکن حکومت نے اس اطلاع کی تردید کرتے ہوئے وضاحت کی کہ ایسی کوئی تجویز نہیں ہے ۔ وزارت فینانس کی یہ تردید اس کے ٹوئٹر صفحہ پر شائع کی گئی ہے ۔ نوٹوں کی تنسیخ کے بعد حکومت ڈیجیٹل لین دین پر زور دے رہی تھی جس کا مقصد نقد رقم کے بغیر معاشرہ قائم کرنا تھا ۔ حکومت نے پرزور انداز میں کہا تھا کہ یہ ہندوستان کو نقد رقم کے بغیر معیشت بنادے گی ۔ ڈیجیٹل اور الیکٹرانک لین دین کی حوصلہ افزائی کرے گی ۔ تاہم آج اپنی وضاحت میں مرکزی وزارت فینانس نے کہا کہ چیک بکس معاشی لین دین کا ناگزیر حصہ ہیں ۔ تجارت کی ریڑھ کی ہڈی ہیں ۔ سودی بازی کا اہم حصہ ہیں اور اکثر یہ تجارتی سودوں میں سکیورٹی کا کام انجام دیتے ہیں ۔ چنانچہ حکومت بینک چیک بکس کو عنقریب منسوخ کرنے کا کوئی ارادہ نہیں رکھتی ۔

TOPPOPULARRECENT