Saturday , November 25 2017
Home / اضلاع کی خبریں / ڈاکٹرس کی حاضری کیلئے سرکاری دواخانوں میں بائیو میٹرک سسٹم

ڈاکٹرس کی حاضری کیلئے سرکاری دواخانوں میں بائیو میٹرک سسٹم

ضلع انتظامیہ اور ڈاکٹرس کے درمیان سرد جنگ
نظام آباد:20؍ مئی (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)سرکاری دواخانہ میں ڈاکٹروں کی حاضری کو یقینی بنانے کیلئے ضلع کلکٹر ڈاکٹر یوگیتا رانا نے بائیو میٹرک نظام کے نافذ کے احکامات جاری کئے تھے اور گذشتہ چند دنوں سے ضلع انتظامیہ اور ڈاکٹروں کے درمیان سرد مہری کی جنگ چل رہی تھی اور ڈاکٹر بائیو میٹرک نظام کی سختی سے مخالفت کی تھی۔ ڈائریکٹر آف میڈیکل ایجوکیشن کے تحت کام کرنے والے ڈاکٹرس پر ضلع کلکٹر کی نگرانی کی مخالفت کی تھی اور بائیو میٹرک نظام کے نافذ کی مخالفت کرنے پر ضلع کلکٹر نے نوٹس جاری کی تھی جس پر ڈاکٹروں نے منتخب نمائندوں سے نمائندگی کرنے پر منتخب نمائندوں نے ضلع کلکٹر کے خلاف کوئی بھی فیصلہ نہ لینے کا ارادہ ظاہر کیا تھا اور کلکٹر کے احکامات پر عمل کرنے کی ان ڈاکٹروں کو ہدایت دی تھی۔ جس پر ڈاکٹروں نے سپرنٹنڈنٹ کے ساتھ ایک اجلاس منعقد کیا اور ڈیوٹی چارٹ تیار کرتے ہوئے 24 گھنٹے دستیاب رہنے کا ارادہ ظاہر کرتے ہوئے بائیو میٹرک کے نظام کے نافذ پر رضامندی ظاہر کی۔ حکومت نے کروڑوہا روپئے کے خرچ سے نظام آباد میں میڈیکل کالج کا قیام عمل میں لایا اور ڈاکٹرس کا تقرر کرتے ہوئے مریضوں کو بہتر سے بہتر طبی سہولتیں فراہم کرنے کی ہدایت دی تھی لیکن ڈاکٹرس سرکاری دواخانہ میں خدمت انجام دینے کے بجائے خانگی طور پر مشق کرنے کو ترجیح دے رہے ہیں۔ حاضری رجسٹر میں دستخط کرنے کے بعد ڈیوٹی سے غیر حاضر ہورہے ہیں جس پر بائیو میٹرک نظام کو نافذکرتے ہوئے ان کی کارکردگی کو درست کرنے کیلئے ضلع کلکٹر کی جانب سے کوشش کی گئی اورکس حد تک کامیاب ہوگی آنے والے دنوں میں اس کے نتائج سامنے آئیں گے۔

TOPPOPULARRECENT