Monday , December 11 2017
Home / اضلاع کی خبریں / ڈاکٹروں کی لاپرواہی سے نومولود کی موت

ڈاکٹروں کی لاپرواہی سے نومولود کی موت

نظام آباد :24؍ اکتوبر (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)ضلع مستقر پر واقع سرکاری دواخانہ میں ڈاکٹروں کی لاپرواہی کے سبب نومولود کی موت واقع ہوگئی ۔ اس واقعہ کے خلاف رشتہ داروں نے شدید احتجاج کرتے ہوئے ڈاکٹروں پر لاپرواہی برتنے کا الزام عائد کیا ۔ تفصیلات کے بموجب ضلع نظام آباد کے آرمور منڈل کے انکا پور سے تعلق رکھنے والی جیوتی کو ڈیلیوری کیلئے کل نظام آباد سرکاری دواخانہ منتقل کیا گیا ۔ دواخانہ منتقل کے بعد ڈاکٹروں نے مریض کا معائنہ کیا اور بعدازاں آپریشن کے ذریعہ ڈیلیوری کی گئی ۔ ڈیلیوری کے بعد ڈاکٹروں نے نومولود فوت ہونے کا اظہار کیا ۔ جس پر رشتہ داروں نے احتجاج کرنا شروع کرتے ہوئے ڈاکٹروں نے لاپرواہی کی جس کی وجہ سے نومولود فوت ہونے کی اطلاع ملنے پر خواتین تنظیموں سے تعلق رکھنے والی خواتین یہاں پہنچ کر ہاسپٹل کے روبرو احتجاج کرنا شروع کیا ۔ آرمور سرکاری دواخانہ میں سہولتیں نہ ہونے کی وجہ سے نظام آباد منتقل کیا گیا اور مختلف معائنوں کے بہانے وقت ضائع کیا گیا اور آپریشن کے دوران خون بہہ جانے کی وجہ سے نومولود فوت ہوگیا ۔ احتجاجیوں نے فرنیچر باہر لاکر پھینک دیا اور احتجاج کرنا شروع کیا تو اس بات کی اطلاع Iٹائون پولیس کو ملتے ہی پولیس یہاں پہنچ کر حالات کا جائزہ لیا اور احتجاجیوں سے بات چیت کرتے ہوئے اس مسئلہ کی یکسوئی اور اقدامات کرنے کا اظہار کیا ۔ نظام آباد سرکاری دواخانہ میں نومولود فوت ہوجانے کے واقعات کے علاوہ کسی نہ کسی بہانے احتجاج کا سلسلہ جاری ہے اور احتجاج کے خاتمہ کیلئے اقدامات نہ کئے جانے کی وجہ سے احتجاج کے سلسلہ میں اضافہ ہوتا جارہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT