Friday , September 21 2018
Home / ڈاکٹر محمد وزارت رسول خان فری میگا میڈیکل اینڈ ہیلت کیمپ میں 45ہزار مریضوں کی تشخیص و علاج

ڈاکٹر محمد وزارت رسول خان فری میگا میڈیکل اینڈ ہیلت کیمپ میں 45ہزار مریضوں کی تشخیص و علاج

ایک ماہ کے دوران 1340فری سرجریز، اپنی نوعیت کے منفرد ہیلت کیمپ کا اختتام

ایک ماہ کے دوران 1340فری سرجریز، اپنی نوعیت کے منفرد ہیلت کیمپ کا اختتام
حیدرآباد۔یکم مارچ۔ (پریس نوٹ) ڈاکٹر محمد وزارت رسول خان فری میڈیکل اینڈ ہیلت کیمپ کا آغاز 28جنوری 2015ء سے ہوا تھا جو 28؍فروری کو اختتام عمل میں آیا۔ گذشتہ ایک ماہ کے دوران 45ہزار 60مریضوں کی تشخیص، علاج و معالجہ اور سرجریز کئے گئے اور انہیں مفت ادویات، ٹرانسپورٹ سہولت اور طعام کا انتظام کیا گیا تھا ۔ ڈاکٹر محمد صارب رسول خان مینجنگ ڈائرکٹر شاداں میڈیکل کالج و ہاسپٹل ا ور ڈاکٹر وزارت رسول خان ویمنس میڈیکل وہاسپٹل نے یہ بات بتائی۔ کیمپ کی سرپرستی محترمہ شاداں وزارت رسول خان سکریٹری شاداں ایجوکیشنل سوسائٹی وڈاکٹر وی آر کے ایجوکیشنل سوسائٹی اور سید اعزار الرحمن وائس چیرمین ڈاکٹر وی آر کے ایجوکیشن سوسائٹی نے کی۔ ڈاکٹر محمد صارب رسول خان کی نگرانی میں پروفیسرز، اسوسی ایٹ پروفیسرس،ماہرو تجربہ کار ڈاکٹرس اور دیگر عملے کی خدمات مریضوں کے لئے گذشتہ ایک ماہ سے جاری تھی۔ ڈاکٹر محمد وزارت رسول خان مرحوم بانی شاداں گروپ آف تعلیمی ادارے جات کی حتی المقدور کوششوں اور جستجو و تڑپ کا نتیجہ ہے کہ آج شاداں میڈیکل کالج و ہاسپٹل اور ڈاکٹر وی آر کے ویمنس میڈیکل کالج و ہاسپٹل کے ذریعہ ہزاروں مریض اپنی تشخیص کراتے ہوئے استفادہ کررہے ہیں۔ کیمپ میں جس طرح چھ ماہ سے خصوصی شعبہ جات کے تحت خدمات انجام بہم پہنچائی جارہی تھی ان میں جنرل میڈیسن، جنرل سرجریز، آرتھوپیڈکس، آبسٹیٹریکس اینڈ گائنکالوجی، پیڈیاٹرکس، ای این ٹی، آپتھالمولوجی، سیکھیاٹری، اینشتھشیا، پالمونولوجی، کارڈیالوجی، پلاسٹک سرجری، آنکولوجی، نیپرورولوجی، یورولوجی، پیڈ یاٹرک سرجری ہیں۔ جملہ 1340مریضوں کی میجر اور مائنر سرجریز کی گئیں۔ جنرل سرجریز کے شعبے میں480سرجریز، گائناکالوجی کے شعبہ میں 460 اور آرتھوپیڈکس میں75، آپتھالوجی میں169 اور ای این ٹی میں 156سرجریز کی گئیں۔ ہر روز 493افراد کے ایکسرے، 1200افراد کے الٹراسائونڈ، 765افراد کے 2Dایکو کے علاوہ لیباریٹری سرویسز کے تحت 9800انوسٹگیشنس شامل ہیں۔ ریڈیالوجی شعبہ میں سی ٹی اسکیان 650، الٹراسائونڈ اسکیانگ میں 1200، ایم آر آئی میں 120‘ لیکرواسکاپی میں 126، ڈائیلاسس میں 148، ڈینٹل چیک اَپ میں 750 جس میں دانتوں کا روٹ کنال ٹریٹمنٹ، فیلاب سرجری اور فزیو تھراپی میں جملہ 5060مریض شامل ہیں۔ اس طرح یہ فری میگا میڈیکل اینڈ ہیلت کیمپ گذشتہ جنوری سے کامیابی کے ساتھ تکمیل پایا۔ اس کیمپ سے استفادہ کنندہ گان کو مزید علاج و معالجہ کے لئے مستقبل میں بھی مکمل مفت سہولتیں فراہم کی جائیں گی۔ ماہر ڈاکٹرس کی خدمات حاصل تھیں ان میں جنرل میڈیسن ٹیم کی قیادت پروفیسر ڈاکٹر بالاناگیشوری و ڈاکٹر ملتانی، جنرل سرجری ٹیم کے قیادت پروفیسر ڈاکٹر علیم اللہ و ڈاکٹر اے وائی چاری، پیڈیاٹرک سرجری ٹیم کی قیادت ڈاکٹر بھارتی ریڈی، آرتھوپیڈکس ٹیم کی قیادت پروفیسر ڈاکٹر دتتا، آبسٹیٹرکس اینڈ گائنالوجی ٹیم کی قیادت پروفیسر ڈاکٹر ارونا رائچل اور ڈاکٹر ونملا، پیڈیاٹرکس ٹیم کی قیادت پروفیسر ڈاکٹر وکرماجیت و ڈاکٹر بشریٰ ، ڈیرماٹولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر داس، ای این ٹی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر غلام غوث، آپتھالمولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر اُوپیندرا، سائکیاٹری ٹیم کی قیادت ڈاکٹر بیگ اور ڈاکٹر منہاج ،اینائستھیشیا ٹیم کی قیادت ڈاکٹر سنجیت کور اور ڈاکٹر احمد، پالمونولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر اسماعیل، کارڈیالوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر شکیل حیدر خان، گیسٹرو انٹرولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر اے مدن، پلاسٹک سرجری ٹیم کی قیادت ڈاکٹر موہن کرشنا، آنکولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر موہن وامشی، نیپرولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر سبرامنیم، نیرولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر راما کرشنا اور یورولوجی ٹیم کی قیادت ڈاکٹر بی کونڈا رمیش اور ڈاکٹر سرینواس نے کی۔ منیجنگ ڈاکٹر صارب رسول خان نے فری میگا میڈیکل ہیلت کیمپ کے کامیاب انعقاد اور مریضوں کا تشفی بخش علاج و معالجہ کے لئے ڈاکٹر اے وائی چاری ڈین ڈاکٹر وی آر کے ویمنس میڈیکل کالج، چیف اڈمنسٹریٹر جناب خواجہ ناصر الدین، ڈاکٹر غوث محی الدین علی اڈوائزر، ڈاکٹر بھارتی ریڈی سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر وی آر کے ہاسپٹل، ڈاکٹر کلپنا آر ایم او ڈاکٹر وی آر کے ہاسپٹل، ڈاکٹر احمد بن محسن کوآرڈینیٹر ڈاکٹر وی آر کے ہاسپٹل کے علاوہ ڈاکٹرس، پیرامیڈیکل و نرسنگ اسٹاف، والنٹرس اور دیگر اسٹاف کا شکریہ ادا کیا۔ یہاں یہ بات قابلِ ذکر ہیکہ ڈاکٹر محمد وزارت رسول خان مرحوم بانی شاداں میڈیکل کالج و ہاسپٹل و ڈاکٹر وی آر کے ویمنس میڈیکل کالج و ہاسپٹل کی انتھک کاوشوں کا ثمر ہیکہ آج یہ دونوں کالجس اور ہاسپٹلس سے استفادہ کرنے والے ہزاروں مریض شفایاب ہوکر بہتر سے بہتر زندگی گزار رہے ہیں۔ ڈاکٹر صاحب مرحوم کا خواب شرمندہ تعبیر ہورہا ہے جس طرح ڈاکٹرمحمد وزارت رسول خان ملت کے ہونہار طلباو طالبات کی تعلیم و تربیت اور انکے بہتر سے بہتر مستقبل کی امیدیں لگائے ہوئے تھے الحمدللہ آج اس کا ثمر دکھائی دے رہا ہے ۔ ڈاکٹر صاحب کی بے تھکان جدوجہد،دور اندیشی، انکساری اور تڑپ نے ان اداروں میں مسلم طلبا و طالبات کو اعلیٰ پروفیشنل تعلیم حاصل کرنے کا موقع فراہم کیا اور انکے تابناک مستقبل کا ضامن بنا۔ اس کیمپ کے دوران مریضوں کو جو سہولیات فراہم کی گئیں تھیں ان میں عصری سہولتوں سے آراستہ آپریشن ٹھیٹرس، پوسٹ آپریٹیو وارڈس، آئی سی سی یو، ایم آئی سی یو، کے علاوہ ایمرجنسی وارڈس شامل ہیں۔ اس کیمپ کے اختتام کے بعد بھی مریضوں کی مفت تشخیص، علاج ومعالجہ اورمفت ادویات فراہم کئے جائیں گے۔

TOPPOPULARRECENT