Thursday , December 13 2018

ڈاکٹر کے نارائنا کی چندرا بابو نائیڈو سے ملاقات

سیاسی صورتحال اور انتخابی مفاہمت پر تبادلہ خیال

سیاسی صورتحال اور انتخابی مفاہمت پر تبادلہ خیال

حیدرآباد ۔ 14 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : تلگو دیشم پارٹی کو سیما آندھرا علاقوں میں حاصل ہورہی مقبولیت کو دیکھتے ہوئے ریاست کی دیگر سیاسی جماعتیں تلگو دیشم پارٹی سے انتخابی مفاہمت پر غور کرنے لگی ہیں ۔ ریاستی سکریٹری کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا ڈاکٹر کے نارائنا نے آج صدر تلگو دیشم مسٹر این چندرا بابو نائیڈو سے ملاقات کرتے ہوئے مجوزہ انتخابات اور ریاست کی موجودہ سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ اس ملاقات کے دوران تلگو دیشم اور سی پی آئی کے درمیان امکانی انتخابی مفاہمت پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا ۔ ذرائع کے بموجب ریاستی سکریٹری کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا نے ریاست کی موجودہ صورتحال میں مضبوط سیاسی اتحاد کی تشکیل اور قومی سطح پر تلگو دیشم پارٹی کے اتحاد کی اطلاعات پر گفتگو کی ۔

پارٹی ذرائع کے بموجب تلگو دیشم پارٹی بھارتیہ جنتا پارٹی کے ساتھ انتخابی مفاہمت کو بڑی حد تک قطعیت دے چکی ہے ۔ ایسی صورت میں بائیں بازو جماعتوں سے اتحاد کا کوئی سوال ہی نہیں ہوتا لیکن بائیں بازو جماعتوں جو کہ قومی سطح پر غیر کانگریس و غیر بی جے پی اتحاد کو مستحکم کرنے کوشاں ہے کی جانب سے ریاست میں تلگو دیشم پارٹی سے اتحاد کی کوششوں سے ایسا محسوس ہوتا ہے کہ بائیں بازو جماعتیں تلگو دیشم کے بی جے پی کی جانب جھکاؤ کو کمزور کرنے کی کوشش میں مصروف ہے ۔ لیکن ان کی یہ کوشش کس حد تک کامیاب ہوگی یہ نہیں کہا جاسکتا ۔ تلگو دیشم پارٹی ذرائع کے بموجب اس ملاقات کے دوران دونوں قائدین نے سیاسی امور کے علاوہ دیگر امور پر بھی گفتگو کی ۔ بعد ازاں سی پی آئی پارٹی ذرائع نے بھی اس بات کی توثیق کی کہ بائیں بازو جماعتیں نظریات کی بنیادوں پر اتحاد کے لیے کوشاں ہیں ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT