Sunday , November 19 2017
Home / دنیا / ڈنمارک میں نسل پرست تبصرہ پر امام معطل

ڈنمارک میں نسل پرست تبصرہ پر امام معطل

کوپن ہیگن ۔ 20 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ڈنمارک کی ایک عدالت نے ایک امام کو ڈنمارک کے نسل پرستی قانون کی خلاف ورزی کا مجرم قرار دیتے ہوئے انہیں 14 دن کی سزائے قید سنائی، تاہم سزا کو معطل رکھا گیا ہے تاکہ جن کی ستمبر 2004ء کی ایک تقریر کی بناء پر جس میں انہوں نے یہودیوں کو ’’گوریلوں اور خنزیروں کی اولاد‘‘ کہا تھا ، حراست میں لے لیا گیا تھا۔ ان کا جرم ثابت ہوجانے کے بعد ڈنمارک کے نسل پرستی قوانین کی بنیاد پر 58 سالہ سمہا امام مسجد ولس موس کو 14 دن کی سزائے قید سنائی، تاہم اس سزا کو معطل رکھا گیا ہے تاکہ وہ فیصلہ کے خلاف اپیل کرسکیں۔

TOPPOPULARRECENT