Thursday , November 23 2017
Home / Top Stories / ڈونالڈ ٹرمپ ‘ امریکہ کیلئے باعث شرم : سعودی شہزادہ الولید بن طلال

ڈونالڈ ٹرمپ ‘ امریکہ کیلئے باعث شرم : سعودی شہزادہ الولید بن طلال

صدارتی دوڑ سے دستبردار ہوجائیں: ولید ‘والد کی دولت سے امریکی سیاستدانوں پر کنٹرول چاہتے ہیں : ٹرمپ کا جواب
دوبئی 12 ڈسمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) سعودی عرب کے دولت مند ترین شہزادہ پرنس الولید بن طلال نے امریکہ کے امکانی صدارتی امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ کو باعث ذلت و شرم قرار دیا ہے ۔ ڈونالڈ ٹرمپ نے گذشتہ دنوں مطالبہ کیا تھا کہ مسلمانوں کو امریکہ میں داخل ہونے سے روک دیا جانا چاہئے ۔ الولید بن طلال نے کہا کہ ریپبلکین دعویدار کو امریکی صدارتی دوڑ سے باہر ہوجانا چاہئے ۔ مسلمانوں کے امریکہ میں داخلہ کو روکنے کے ڈونالڈ ٹرمپ کے مطالبہ پر دنیا بھر میں تنقیدیں کی جا رہی تھیں۔ انہوں نے کیلیفورنیا میں گذشتہ ہفتے ایک جوڑے کی جانب سے کی گئی فائرنگ کے بعد یہ ریمارکس کئے تھے ۔ الولید بن طلال نے ڈونالڈ ٹرمپ سے کہا کہ وہ اپنی پارٹی ہی کیلئے نہیں بلکہ سارے امریکہ کیلئے باعث شرم ہیں۔ انہوں نے اپنے ٹوئیٹر پر ٹرمپ سے مخاطب ہوتے ہوئے یہ بات کہی ۔ انہوں نے ٹرمپ سے کہا کہ انہیں امریکی صدارتی دوڑ سے دستبردار ہوجانا چاہئے کیونکہ اس میں انہیں کامیابی حاصل نہیںہوگی ۔ الولید کے ٹوئیٹ کے کچھ ہی دیر بعد خود ٹرمپ نے جوابی ٹوئیٹ کیا ہے اور کہا کہ الولید بن طلال چاہتے ہیںکہ والد کی دولت سے امریکی سیاستدانوں پر کنٹرول کریں لیکن جب وہ ( ٹرمپ ) صدر منتخب ہوجائینگے تو ولید ایسا نہیں کرسکیں گے ۔ ٹرمپ کے ریمارس کی وجہ سے انہیں مشرق وسطی میں پہلے ہی کاروباری نقصان کا سامنا کرنا پڑا ہے جہاں ڈپارٹمنٹل اسٹورس کے ایک بڑے گروپ نے ٹرمپ ہوم کی اشیا کو فروخت کرنا بند کردیا ہے ۔ یہ کمپنی لیمپس ‘ آئینے اور جیویلری باکس فروخت کرتی ہے ۔ جمعرات کو دوبئی کی رئیل اسٹیٹ فرم ڈاماک نے اپنے کاروبار سے ٹرمپ کا نام اور ان کی تصویر علیحدہ کردی ہے ۔ یہ فرم ٹرمپ کیس اتھ مل کر 6 بلین ڈالرس کا گولف کامپلکس تعمیر کر رہی ہے ۔ الولید بن طلال سعودی حکمران شاہ سلمان کے بھانجے ہیں اور وہ کئی بین الاقوامی کمپنیوں میں حصہ داری رکھتے ہیں جن میں ٹوئیٹر اور سٹی گروپ بھی شامل ہے ۔ گذشتہ جولائی میں انہوں نے اعلان کیا تھا کہ وہ 32 بلین ڈالرس کی رقم آئندہ برسوں میں خیراتی کاموں پر خرچ کرینگے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT