Sunday , December 17 2017
Home / Top Stories / ڈونالڈ ٹرمپ کی آج بحیثیت صدر امریکہ حلف برداری

ڈونالڈ ٹرمپ کی آج بحیثیت صدر امریکہ حلف برداری

ارکان خاندان کے ساتھ نیویارک سے واشنگٹن پہونچے ، ہیلاری کلنٹن اور تین سابق صدور شرکت کریں گے

نیویارک ۔ /19 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) ڈونالڈ ٹرمپ امریکہ کے 45 ویں صدر کی حیثیت سے جائزہ لینے کیلئے آج نیویارک سے واشنگٹن پہونچے ۔ نیویارک سٹی ان کا آبائی شہر ہے جہاں رئیل اسٹیٹ سے تعلق رکھنے والے ٹرمپ کی یادیں وابستہ ہیں ۔ ریپبلکن ارب پتی نے آئندہ چار سال کے دوران امریکی سیاست کو پوری طرح بدل دینے کا وعدہ کیا ہے اور انہوں نے آج اس ٹوئیٹ کے ساتھ دن کا آغاز کیا کہ ’’سفر شروع ہوچکا ہے اور میں اسے امریکی عوام کیلئے ایک عظیم سفر بنانے سخت محنت و جدوجہد کرونگا ۔ مجھے اس بارے میں کوئی شبہ نہیں کہ ہم سب ملکر پھر ایک بار امریکہ کو عظیم ملک بنائیں گے ‘‘ ۔ قبل ازیں 70 سالہ ٹرمپ اور ان کے ارکان خاندان نیویارک سٹی سے واشنگٹن کیلئے روانہ ہوئے ۔ اس بار وہ اپنے خانگی طیارے میں نہیں بلکہ فوجی طیارے میں سوار تھے ۔ ٹرمپ کے ارکان خاندان میں ان کی بیٹی ایوانکا ، داماد جیرڈ کشنر ، ان کے دو بیٹے ڈان اور ایرک کے علاوہ دو بہو اور ان کے بچے شامل ہیں ۔ ٹرمپ اور ان کی اہلیہ ملینیا کا سینئر فوجی عہدیداروں نے خیرمقدم کیا ۔ یہاں پہونچتے ہی وہ انتہائی سخت سکیورٹی میں موٹر کار میں سوار ہوئے اور یہ قافلہ 20 منٹ کا سفر طئے کرتے ہوئے واشنگٹن ڈی سی پہونچا ۔ ٹرمپ بلیئر ہاؤز میں توقف کریں گے جو صدر امریکہ کا سرکاری گیسٹ ہاؤز ہے ۔ وہ دنیا کے سب سے طاقتور ترین ملک کے لیڈر کی حیثیت سے کل حلف لیں گے جبکہ واشنگٹن میں ہزاروں افراد ان کی تائید اور مخالفت میں مظاہرے کررہے ہیں ۔ ڈونالڈ ٹرمپ کل دوپہر بحیثیت صدر امریکہ عہدہ و رازداری کا حلف لیں گے جس کی تاریخ و وقت کا تعین امریکی دستور کے مطابق کیا گیا ہے ۔ اس موقع پر حریف ڈیموکریٹک صدارتی امیدوار ہیلاری کلنٹن ، 3 سابق صدور اور کئی اہم شخصیتیں شریک ہوں گی ۔ ریپبلکن صدر کا کوئی سیاسی ماضی نہیں رہا اور انہیں کوئی فوجی تجربہ بھی نہیں ہے ۔ اس کے علاوہ وہ کبھی کسی عوامی عہدہ پر فائز بھی نہیں رہے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT