Friday , November 24 2017
Home / جرائم و حادثات / ڈپٹی کمشنر ٹیکسیس ظاہر کرتے ہوئے لوگوں کو دھوکہ

ڈپٹی کمشنر ٹیکسیس ظاہر کرتے ہوئے لوگوں کو دھوکہ

ایک شاطر دھوکہ باز گرفتار
حیدرآباد /8 جون ( سیاست نیوز ) سنٹرل کرائم اسٹیشن کی سائبر کرائم پولیس نے ایک ایسے شاطر دھوکہ باز کو گرفتارکرلیا جو خود کو ڈپٹی کمشنر سنٹرل بورڈ آف ڈائرکٹ ٹیکسیس ظاہر کرتے ہوئے خاتون سے لاکھوں روپئے ہڑپ لئے ۔ ڈپٹی کمشنر آف پولیس ڈیٹکٹیو ڈپارٹمنٹ مسٹر اویناش موہنتی نے بتایا کہ بیگم پیٹ کی ساکن ایک خاتون نے سائبر کرائم پولیس سے شکایت درج کروائی جس میں یہ بتایا کہ ستمبر سال 2013 میں ایک شخص ہیمنت گپتا نے میٹریمونیل ویب سائیٹ کے ذریعہ رابطہ قائم کیا اور خود کو ڈپٹی کمشنر ڈائرکٹ ٹیکسیس ظاہر کرتے ہوئے بنگلور میں مقیم ہونے کا دعوی کیا۔ ہیمنت گپتا نے اس خاتون کو دو موبائیل فون نمبرات کے ذریعہ مسلسل ربط کیا کرتا تھا اور بعد ازاں اس سے واٹس اپس اور ویڈیو کالنگ کے ذریعہ گہرے تعلقات قائم کرتے ہوئے شادی کرنے ارادہ ظاہر کیا ۔ اسی دوران مذکورہ دھوکہ باز نے خاتون کو بنگلور میں واقع ایک فلیٹ خریدنے کا مشورہ دیا اور اس سلسلے میں 5.3 لاکھ روپئے تنمئے گوسوامی کے ایچ ڈی ایف سی کے بینک کھاتہ میں فوری نقد رقم منتقل کرنے کیلئے کہا ۔ خاتون دھوکہ باز کی جھانسہ میں آکر مذکورہ رقم ڈسمبر سال 2013 میں منتقل کی اور رقم حاصل کرنے کے بعد ہیمنت گپتا نے اس سے رابطہ ترک کردیا اور اپنا موبائیل فون سوئچ آف کردیا ۔ سائبر کرائم پولیس نے اس سلسلے میں مقدمہ درج کرتے ہوئے تنمئے گوسوامی کے بینک کھاتہ کی جانچ کیلئے کولکتہ پہونچی جہاں پر دھوکہ باز کی اصلی شناخت کا پتہ لگا ۔ سائبر کرائم پولیس نے تنمئے گوسوامی کو ممبئی میں گرفتار کرکے اسے حیدرآباد منتقل کیا اور بعد ازاں آج عدالت میں پیش کرتے ہوئے اسے جیل منتقل کردیا۔

TOPPOPULARRECENT