Saturday , November 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / ڈی سرینواس کی سیاسی موقع پرستی افسوسناک

ڈی سرینواس کی سیاسی موقع پرستی افسوسناک

ترجمان تلنگانہ پردیش کانگریس قاضی سید ارشد پاشاہ کا ریمارک
نظام آباد /17 ستمبر ( راست  ) قاضی سید ارشد پاشاہ ترجمان تلنگانہ پردیش کانگریس نے مسٹر ڈی سرینواس خصوصی مئیر  حکومت تلنگانہ کے اس بیان پر حیرت و افسوس کا اظہار کیا کہ وہ اب پرانہتا چیورلہ آبپاشی پراجکٹ کے ڈیزائن میں اب تبدیلی کے حامی بن گئے ہیں ۔ انہوں نے یاد دلایا کہ کانگریس کے دور حکومت میں ہی زرعی اراضیات کو پانی کی سربراہی کے سلسلہ میں نہ صرف ڈیزائن کی تیاری کی گئی تھی اور اس پراجکٹ کے تعمیری پیاکجس کے کاموں کیلئے فنڈس کی منطوری عمل میں لائی گئی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ مسٹر ڈی سرینواس ٹی آر ایس میں شامل ہونے کے بعد ایک کابینی درجہ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد رات دن کے سی ار کے قصیدے پڑھ رہے ہیں ۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ تلنگانہ کا مستقبل کے سی آر کے ہاتھوں میں محفوظ ہے۔ انہوںنے کہا کہ مسٹر ڈی سرینواس نے کانگریس پارٹی سے علحدہ ہونے کا فیصلہ محض عہدہ کے حصول کیلئے کیا تھا جبکہ کانگریس پارٹی ہی نے ان کوسیاسی اور عوامی راہوں پر آگے بڑھایا تھا ۔ کانگریس سے کئی دہوں کی رفاقت محض ایک عہدہ کیلئے ختم کردی گئی جوکہ سیاسی موقع پرستی کی ایک افسوسناک مثال ہے جو نہ صرف سیاسی بلکہ سماجی اخلاقی اعتبار سے بھی مناسب نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کے سی آر وزیر اعظم نریندر مودی کی تقلید کر رہے ہیں اور انہوں نے بیرونی دوروں کی شروعات کی ہے ۔ ادھر تلنگانہ میں کسان خودکشیاں کر رہے ہیں اور چیف منسٹر بیرونی ملکوں کے سفر پر ہیں ۔ انہوں کہا کہ ایک سال سے زائد عرصہ گذر گیا لیکن حکومت نے غریب طبقات ہی نہیں بلکہ اقلیت کو بری طرح نظر انداز کر دیا ہے ۔ تعلیم اور روزگار کے شعبوں میں 12 فیصد تحفظات کی فراہمی کیلئے ابھی تک کوئی قدم نہیں اٹھایا گیا ۔ انہوں نے یہ ریمارک کیا کہ سنہرے تلنگانہ کی سنہری باتیں عوام کے بنیادی مسائل کے حل کا ذریعہ نہیں ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT