Wednesday , December 19 2018

ژی جن پنگ چین کے صدر اور وانگ کیوشن نائب صدر

بیجنگ۔ 17مارچ (سیاست ڈاٹ کام) چین کی پارلیمنٹ نے آج متفقہ طور پر ژی جن پنگ کو ملک کا صدر منتخب کر لیا۔دارالحکومت بیجنگ میں واقع گریٹ ہال آف دی پیپلز میں صحافی برادری بھی ژی جن پنگ کے دوبارہ چین کے صدر منتخب ہونے کی عینی شاہد بنی ۔ایوان حکمران کمیونسٹ پارٹی کے نمائندوں سے بھرا ہوا تھا۔ژی جن پنگ کے دوبارہ منتخب ہونے کا امکان پہلے ہی سے تھا۔ اس سے پہلے اتوار کو چین کی پارلیمنٹ نے آئین میں ترمیم کرکے صدر کی مدت کی حد کو ختم کر دیا تھا۔ اس کا سیدھا مطلب ہے کہ ژی جن پنگ جب تک چاہے چین کے صدر رہ سکتے ہیں۔دوسری طرف چین کی پارلیمنٹ نے آج ملک کے طاقتور رہنما وانگ کیوشن کو نائب صدر منتخب کیا۔ کیوشن اس سے پہلے بھی چین کے صدر ژی جن پنگ کے اہم ساتھی رہ چکے ہیں اس لیے ان کا انتخاب پہلے سے ہی طے مانا جا رہا تھا۔ دارالحکومت بیجنگ واقع گریٹ ہال آف دی پیپلز میں میں کیوشن کے منتخب ہونے کے اعلان کے بعد انہوں نے مسٹر جن پنگ سے ہاتھ ملایا۔ نائب صدر کے انتخاب میں مسٹر کیوشن کے حق میں 2970 اور مخالفت میں صرف ایک ووٹ پڑا۔

TOPPOPULARRECENT