Friday , April 27 2018
Home / اضلاع کی خبریں / کاروبار کے آغاز کیلئے مقامی افراد کی آمدنی سے واقفیت ضروری

کاروبار کے آغاز کیلئے مقامی افراد کی آمدنی سے واقفیت ضروری

نظام آباد میں مبین بشیر خان کا اجلاس سے خطاب
نظام آباد :28؍ نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)مفلسی انسان کو کفرکے قریب کردیتی ہے اسلام نے مال کو جمع کرنے کی ممانعت نہیں کی ہے ۔ بلکہ ممانعت وہاں پر ہے جہاں مال کو بے جاخرچ کرنے پر ہے ۔ ہم کو اس ارادہ کے ساتھ مال کو حاصل کرناچاہئے کہ خوب مال کمائوں اور خوب اللہ کی راہ میںخرچ کروں۔ یہ دعائیں آپ ﷺکے صحابہ ؓ بھی اللہ سے مانگا کرتے تھے۔ ان خیالات کا اظہار مبین بشیر خان رکن رفاہ چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز ممبئی نے جماعت اسلامی ہند نظام آباد اربن کے توسیعی لیکچر بعنوان ’’کاروبار کا آغاز اور ترقی‘‘پرثناء بینکویٹ ہال بودھن روڈ پر عوام کے کثیرمجمع کو خطاب کرتے ہوئے کیا۔آپ نے اپنا لیکچر جاری رکھتے ہوئے کہاکہ رفاہ چیمبرس آف کامرس اینڈ انڈسٹریز ملت اسلامیہ کی گرتی ہوئی معاشی حالات کے پس منظر میں پورے ہندوستان میں یہ رہنمائی کا کام انجام دیتاآرہاہے۔ صلاح الدین سی ای او رفاہ چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز نے کہاکہ آج ہم جس مرض میں مبتلا ہیں وہ خودغرضی ہے ۔یعنی ہر شخص اس خیال سے کاروبار کرنے لگتا ہے کہ آمدنی صرف مجھے ملے، اور سب ہی کام میں انجام دوں اور میں ہی پیسوں کے کائونٹر پربیٹھوں اور میں اور میرے بچے میرا گھر بس اسی خیال کے ساتھ کاروبار شروع کرتاہے جبکہ یہ کاروبار اوراس فکر و خیال سے ہمارے معاشرے کو شدید نقصانات کا سامناہے۔اگر امبانی، ٹاٹابرلااسی سونچ کے ساتھ آگے بڑھتے تو کبھی ترقی نہیں کرتے۔ بلکہ آدمی کی فکر یہ ہونا چاہئے کہ میری طرف سے کتنے افراد کو روزگار مہیا کیاجاسکتاہے کام کرنا کوئی بڑی بات نہیں ہے بلکہ کام لینا بڑا کام ہے ۔مرزاافضل بیگ جنرل سکریٹری رفاہ نے کہاکہ کسی بھی کاروبار کے آغاز کیلئے سب سے پہلے اس مقام کے افراد کی آمدنی اور ان کے خریدنے کی صلاحیتوں کو پیش نظر رکھنا چاہئے ۔

TOPPOPULARRECENT