Tuesday , December 11 2018

کارکنوں کی بے حسی سے پارٹی کو شکست : ملائم

انتخابات سے قبل ہی اخلاص سے کام کرنا تر ک کردینے کی شکایت

انتخابات سے قبل ہی اخلاص سے کام کرنا تر ک کردینے کی شکایت
لکھنو 5 اگسٹ ( سیاست ڈاٹ کام ) سماجوادی پارٹی کے سربراہ ملائم سنگھ یادو نے حالیہ لوک سبھا انتخابات میں پارٹی کی شکست کیلئے کارکنوں کی بے حسی کو ذمہ دار قرار دیا ہے ۔ انہوں نے یہاں ایک تقریبا سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے کئی قائدین نے اور کارکنوں نے انتخابات سے قبل ہی کام کرنا چھوڑ دیا تھا ۔ ان میں اخلاص کی کمی تھی ۔ ہم کو اسمبلی انتخابات میں اکثریت حاصل ہوئی لیکن لوک سبھا انتخابات میں عوام کی تائید ختم ہوگئی ۔ ہمیں صرف پانچ نشستوں پر ہی اکتفا کرنا پڑا ہے ۔ انہوں نے سینئر لیڈر جانیشور مشرا کی یاد میں ایک پارک کا افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ ان کی پارٹی خود ساختہ مودی لہر کو روکنے میں ناکام رہی ہے ۔ مرکز کی بی جے پی حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے ملائم سنگھ یادو نے کہا کہ اس نے کئی مسائل کو حل کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن اس نے ابھی تک کچھ نہیں کیا ہے اور آگے بھی وہ ایسا نہیں کرسکتی ۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی نے روزگار فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن انہوں نے ابھی تک اس تعلق سے کچھ بھی نہیں کیا ہے ۔ انہوں نے چین اور پاکستان کے قبضہ میں ہماری اراضی کو حاصل کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن قومی اہمیت کے حامل اس کام کو بھی انجام نہیں دیا جاسکا ہے ۔

امرسنگھ چار سال بعد ملائم سنگھ
کے ساتھ ایک ہی شہ نشین پر
لکھنؤ ۔ 5 اگست (سیاست ڈاٹ کام) راجیہ سبھا ایم پی امر سنگھ آج چار سال کے طویل عرصہ میں پہلی بار سماج وادی پارٹی سربراہ ملائم سنگھ کے ساتھ شہ نشین پر ایک ساتھ نظر آئے جب انہوں نے چار سال قبل ناراض ہوکر پارٹی چھوڑ دی تھی۔ حالانکہ اس معاملہ میں خود امر سنگھ کا یہ کہنا ہیکہ اس واقعہ کو سیاست سے جوڑنے کی چنداں ضرورت نہیں۔ سماج وادی پارٹی کے سینئر قائد جانیشور مشرا سے موسوم ایک وسیع و عریض پارک کے افتتاح کے موقع پر امر سنگھ کو بھی مدعو کیا گیا تھا۔ امر سنگھ نے بہترین پارک بنوانے ملائم سنگھ اور ان کے بیٹے وزیراعلیٰ اکھیلیش یادو کو مبارکباد پیش کی۔ امر سنگھ نے یہ بھی کہا کہ وہ خود کو ’’ملائم وادی‘‘ کہلوانا پسند کریں گے کیونکہ 2010ء میں ملائم سنگھ سے علحدگی سے قبل دونوں قائدین ایک ان دو قالب سمجھا جاتا تھا۔

TOPPOPULARRECENT