Saturday , December 15 2018

کالادھن پر روک لگانے کے معاہدے پر دستخط ہوگی

نئی دہلی، 17 مئی (سیاست ڈاٹ کام) حکومت نے کالے دھن پر روک لگانے کے مقصد سے کثیر جہتی معاہدے پر دستخط کرنے کو آج منظوری دی ہے جس سے ٹیکس چوری کرنے کے مقصد سے بیس ایروزن اینڈ پرافٹ شفٹنگ پر لگام لگائی جا سکے گی ۔  وزیر اعظم نریندر مودی کی صدارت میں یہاں کابینہ کی میٹنگ میں یہ منظوری دی گئی۔ وزیر توانائی پیوش گوئل نے میٹنگ میں کئے گئے فیصلوں کی معلومات فراہم کرتے ہوئے کہا کہ 2015میں جی 20 اور او ای سی ڈی کے اجلاس میں مودی نے یہ مسئلہ اٹھایا تھا جس کے بعد دنیا بھر کے ممالک اس معاہدے کیلئے تیار ہوئے ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے دستخط کرنے کی منظوری فراہم کر دی ہے ۔ دنیا بھر میں تین ہزار سے زائد معاہدے کئے گئے ہیں جس پرنظر ثانی کرنا ممکن نہیں ہے ۔ اسی کے پیش نظر یہ معاہدے کئے جا رہے ہیں تاکہ کوئی بھی کم ٹیکس یا صفر ٹیکس والے ممالک میں بیس ایروزن اینڈ پرافٹ شفٹنگ نہیں کر سکے گا۔ کمپنیاں بالخصوص ملٹی نیشنل کمپنیاں ٹیکس چوری کرنے کے مقصد سے اپنے منافع کو منتقل کرتی ہیں ۔ یہ منتقلی ایسے ممالک کی اکائیوں میں کیا جاتا ہے جہاں بہت کم کارپوریٹ ٹیکس یا جہاں یہ ٹیکس صفر ہے ۔

TOPPOPULARRECENT