Friday , November 24 2017
Home / ہندوستان / کانشی رام کو بھارت رتن ایوارڈ دینے کا مطالبہ

کانشی رام کو بھارت رتن ایوارڈ دینے کا مطالبہ

یوم پیدائش تقریب سے چیف منسٹر دہلی کا خطاب
روپ نگر ( پنجاب ) ۔/15مارچ ، ( سیاست ڈاٹ کام ) عام آدمی پارٹی کنوینر اور چیف منسٹر دہلی ارویند کجریوال نے آج کانشی رام کو بھار ت رتن ایوارڈ دینے کا مطالبہ کیا ہے اور انہیں ایک عظیم دوراندیش اوربصارت و بصیرت کا حامل لیڈر قرار دیا۔ بہوجن سماج پارٹی کے بانی کانشی رام کی 82ویں یوم پیدائش کے موقع پر ان کے آبائی گاؤں پرتی پور بنگا میں ایک جلسہ عام کو مخاطب کرتے ہوئے چیف منسٹر نے کہا کہ کانشی رام بھارت رتن ایوارڈ کے مستحق ہیں کیونکہ وہ بی آر امبیڈکر کے بعد دلت سماج کے ایک عظیم لیڈر تھے۔ قبل ازیں کانشی رام کی یادگار ( میموریل ) پہنچنے پر کانشی رام کی بہن سورون کور اور دیگر ارکان خاندان کے علاوہ عاپ کے کارکنوں نے کجریوال کا شاندار استقبال کیا۔ اس موقع پر انہوں نے کانشی رام کے مجسمہ کی گلپوشی کی جبکہ کانشی رام چیریٹبل فاؤنڈیشن کی جانب سے چیف منسٹر کو سروپا پیش کیا گیا۔ مسٹر کجریوال نے کہا کہ اگر پنجاب میں عام آدمی پارٹی کو اقتدار میں لایا گیا تو دلت سماج کیلئے کانشی رام نے  جو خواب دیکھا ہے اس کو شرمندہ تعبیر کیا جائیگا۔ انہوں نے حکومت پنجاب پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں دلت خواتین کی عصمت ریزی اور زندہ جلادینے کے واقعات بڑھتے جاریہ ہیں اور ڈاکٹر امبیڈکر کے نام پر کلب قائم کرنے پر نوجوانوں کو ہراساں کیا جارہا ہے۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ پنجاب میں اکالی اور دیگر ریاستوں میں بی جے پی دلتوں پر مظالم ڈھارہے ہیں۔ ستم ظریفی یہ ہے کہ حیدرآباد یونیورسٹی کے ایک دلت اسکالر روہت ویملا کی خودکشی واقعہ میں مرکزی وزراء ملوث ہونے کے باوجود کوئی کارروائی نہیں کی گئی۔ کجریوال نے یہ دعویٰ کیا ہے کہ پنجابی عوام نے آئندہ سال اسمبلی انتخابات کیلئے عام آدمی پارٹی کے حق میں ووٹ دینے کا ذہن بنالیا۔ انہوں نے کہا کہ ملک گیر سطح پر پنجاب میں امن و قانون کی صورتحال ابتر ہے اور یہاں پر کوئی بھی شہری اپنے آپ کو محفوظ تصور نہیں کرتا۔ پنجاب کے نوجوان منشیات کے عادی ہوگئے ہیں اور تعلیمی نظام انحطاط پذیر ہوگیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT