Saturday , November 18 2017
Home / ہندوستان / کانپور میں مذہبی پوسٹر کی بے حرمتی ، ملزمین کی تصاویر جاری

کانپور میں مذہبی پوسٹر کی بے حرمتی ، ملزمین کی تصاویر جاری

کانپور ۔ 21 ۔ دسمبر : ( سیاست ڈاٹ کام) : اترپردیش کے شہر کانپور میں ایک مذہبی پوسٹر کی مبینہ بے حرمتی پر عوام کے دو طبقات کے درمیان پرتشدد تصادم کے واقعات کے دو ماہ بعد پولیس نے اس واقعہ کے اصل ملزمین کی تصاویر پر مبنی بڑے پوسٹرس فاضل پور علاقہ میں نصب کیے ہیں ۔ کانپور پولیس کے اسپیشل سپرنٹنڈنٹ شالبھ ماتھر نے کہا ہے کہ ان ہورڈنگس پر واقعہ کے 30 اصل ملزمین کے نام اور تصاویر کے علاوہ پولیس رابطہ کی تفصیلات پیش کی گئی ہیں ۔ ایس ایس پی نے کہا کہ ’’ مفرور ملزمین کے بارے میں اطلاعات فراہم کرنے والوں کو خصوصی انعامات کا پیشکش بھی کی گئی ہے ‘‘ ۔ واضح رہے کہ فضل گنج پولیس اسٹیشن کے تحت درشن پوروا میں 24 اکٹوبر کو ایک مسخ شدہ مذہبی پوسٹر دستیاب ہوا تھا اور ضلع کے کئی حصوں میں زبردست کشیدگی پھیل گئی تھی جب ایک طبقہ کے افراد نے اپنے مذہبی پوسٹر کی بے حرمتی کا دوسرے طبقہ کے افراد پر الزام عائد کیا تھا ۔ اس واقعہ کے بعد ایک برہم ہجوم نے چار پولیس اسٹیشنوں کے حدود میں درجنوں مقامات پر فائرنگ ، سنگباری کی تھی اور کئی گاڑیوں کو نذر آتش کردیا گیا تھا ۔ بعد ازاں چمن گنج ، سیسامئو ، فضل گنج اور نوہستہ جیسے چار پولیس اسٹیشنوں میں بالترتیب 1000 ، 800 ، 600 اور 150 نامعلوم افراد کے خلاف مقدمات درج کئے گئے تھے ۔۔

TOPPOPULARRECENT