Tuesday , December 12 2017
Home / شہر کی خبریں / کانچہ ایلیا کی گاڑی پر حملہ ، ہلاک کرنے کی کوشش کا الزام

کانچہ ایلیا کی گاڑی پر حملہ ، ہلاک کرنے کی کوشش کا الزام

پرکال میں واقعہ ، آریہ وائیسا اور دلت طبقات میں کشیدگی ، پولیس میں شکایت
پرکال ( ورنگل ) ۔ 23 ۔ ستمبر : ( پی ٹی آئی ) : دلت مصنف اور دانشور کانچہ ایلیا نے آج پولیس میں ایک شکایت درج کروائی جس میں کہا گیا ہے کہ اس ٹاون میں چار افراد نے ان کی گاڑی پر حملہ کیا اور انہیں ہلاک کرنے کی کوشش کی ۔ کانچہ ایلیا پر مبینہ حملے کے بعد آریہ وائیسا طبقہ اور دلتوں کے درمیان کشیدگی پیدا ہوگئی اور ان دونوں طبقات کے افراد ایک دوسرے کے مد مقابل آگئے تھے لیکن پولیس نے دونوں گروپوں کو منتشر کرتے ہوئے کشیدگی کو مزید بڑھنے سے روک دیا ۔ ایک پولیس عہدیدار نے کہا کہ آریہ وائیسا طبقہ کے 200 ارکان نے پرکال ٹاون میں ایلیا کی گاڑی دیکھ کر امبیڈکر چوراہا پر مظاہرہ کیا ۔ دلت مصنف بھوپل پلی میں ایک تقریب میں شرکت کے بعد حیدرآباد کی سمت روانہ ہورہے تھے ۔ آریہ وائیسا برادری کانچہ ایلیا پر ان کی کتاب ’ ساماجیکا اسمگلر لوکوماٹولو ‘ (وائیسا سماجی اسمگلرس ہیں ) کے سبب برہم ہیں ۔ پولیس عہدیدار نے کہا کہ کانچہ ایلیا کے ڈرائیور نے گڑبڑ کے اندیشوں کو محسوس کرنے کے بعد گاڑی پرکال ٹاون پولیس اسٹیشن کی سمت موڑ دیا تھا ۔ ایلیا نے اپنی شکایت میں کہا کہ چار افراد نے ان کی گاڑی پر حملہ کیا اور انہیں ہلاک کرنے کی کوشش کی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ تاحال کوئی ایف آئی آر درج نہیں کیا گیا ہے ۔ احتجاجیوں کی جانب سے کانچہ ایلیا کا پیچھا کرتے ہوئے پولیس اسٹیشن پہونچ جانے اور گھیراؤ کرنے کے سبب صورتحال کشیدہ ہوگئی تھی ۔ عہدیدار نے کہا کہ دونوں طبقات کے افراد نے نعرہ بازی کی ۔ سرکل انسپکٹر جان نرسمہلو اور دیگر پولیس اہلکاروں نے دونوں گروپوں کو پرسکون رہنے کی ترغیب دیتے ہوئے پولیس اسٹیشن سے چلے جانے کی ہدایت کی ۔ تاہم دونوں گروپوں کے ارکان کراسنگ پر جمع ہو کر دوبارہ نعرہ بازی شروع کردی اور پولیس نے وہاں پہونچکر انہیں منتشر کردیا ۔ عہدیداروں نے کہا کہ ایلیا پولیس کی حفاظت میں ورنگل روانہ ہوئے ۔۔

TOPPOPULARRECENT