Wednesday , January 17 2018
Home / Top Stories / کانگریس اقتدار کی بھوکی ‘ ٹی آر ایس ترقی کی پیاسی

کانگریس اقتدار کی بھوکی ‘ ٹی آر ایس ترقی کی پیاسی

ترقی کی راہ میں اپوزیشن کی جانب سے رکاوٹیں ‘ وزیر آبپاشی ہریش راؤ کا بیان
حیدرآباد 10 ڈسمبر ( این ایس ایس ) وزیر آبپاشی ٹی ہریش راؤ نے آج الزام عائد کیا کہ اپوزیشن کانگریس قائدین کو اقتدار کی ہوس ہے جبکہ برسر اقتدار ٹی آر ایس ایسی پارٹی ہے جو ریاست کو تمام محاذوں پر ترقی دینے کی پیاس رکھتی ہے ۔ وزیر برقی جی جگدیش ریڈی کے ساتھ ہریش راؤ نے ناگرجناساگر پراجیکٹ سے لیفٹ کنال کیلئے پانی کی اجرائی عمل میں لائی ۔ ہریش راؤ نے کہا کہ کانگریس پارٹی پراجیکٹس پر جھوٹے دعوے کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کا مقصد یہ ہے کہ چار لاکھ ایکڑ اراضیات کو ساگر کنال کے تحت سیراب کیا جائے اور اس کے کام تیزی کے ساتھ چل رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پراجیکٹ کو عصری بنانے کا کام ٹی آر ایس حکومت نے 65 فیصد تک مکمل کرلیا ہے جبکہ کانگریس نے صرف 30 فیصد کام کیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ آئندہ سال 5 اپریل کو قطعی مرحلہ میں پانی جاری کیا جائیگا اور مابقی پانچ فیصد کام آئندہ سال جون تک مکمل ہوجائیں گے ۔ ہریش راؤ نے بتایا کہ ٹی آر ایس حکومت نے اپنے ساڑھے تین سالہ دور اقتدار میں کاموں عصری بنانے کا عمل 65 فیصد تک مکمل کرلیا ہے ۔ اس کیلئے 1,265 کروڑ روپئے خرچ کئے گئے ہیں۔ انہوں نے محکمہ آبپاشی کے عہدیداروں کی ستائش کی جنہوں نے یہ کام معیار کے ساتھ بروقت مکمل کیا ہے ۔ انہوں نے عہدیداروں سے کہا کہ وہ بنیادی سطح پر بھی کام کریں تاکہ مابقی کاموں کو بھی بروقت مکمل کیا جاسکے ۔ وزیر آبپاشی نے پراجیکٹس کے خلاف عدالتوں سے رجوع ہونے پر کانگریس کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ کانگریس پارٹی ایسا کرتے ہوئے عوام کو حکومت کے خلاف اکساتے ہوئے سیاسی فائدہ حاصل کرنا چاہتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ ممکن نہیں ہے کیونکہ حکومت پراجیکٹس کے کاموں کو مکمل کرنے کیلئے بے تکان جدوجہد کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس نے اپنے نظریات کو ترک کردیا ہے اور سستی سیاست کرتے ہوئے ترقیاتی کاموں میں رکاوٹ پیدا کرنا چاہتی ہے تاکہ عوام کو گمراہ کیا جاسکے ۔ تاہم باشعور عوام ان کی سازشوں سے باخبر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مشن بھاگیرتا اور مشن کاکتیہ پروگرامس کی قومی سطح پر بھی ستائش ہو رہی ہے اور ریاست اس موقع میں ہے کہ عوام کو 24 گھنٹے برقی سربراہ کی جاسکے ۔ دونوں وزرا نے اودئے سمدرم لفٹ اسکیم اور پمپ ہاوز کے کاموں کا بھی مارکٹ پلی منڈل میں جائزہ لیا ۔ رکن پارلیمنٹ جی سکھیندر ریڈی اور دوسرے بھی موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT