Wednesday , November 21 2018
Home / Top Stories / کانگریس خاتون کارکن پر مجلس کے غنڈوں کا حملہ

کانگریس خاتون کارکن پر مجلس کے غنڈوں کا حملہ

نامپلی میں کانگریس امیدوار فیروز خاں کے حق میں مہم چلانے والے کارکن نشانہ
حیدرآباد ۔ /7 نومبر (سیاست نیوز) انتخابات کی سرگرمیوں میں اضافہ ہونے کے ساتھ ہی کانگریس پارٹی کی بڑھتی ہوئی مقبولیت سے قیادت بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئی ہے اور اپنے سیاسی حریفوں پر حملوں کا سلسلہ شروع کردیا ہے ۔ اس مرتبہ خواتین کو بھی نہیں بخشا جارہا ہے اور ان پر حملے کئے جارہے ہیں ۔ حلقہ اسمبلی نامپلی میں پیش آئے ایک تازہ ترین واقعہ میں کانگریس کی سرگرم کارکن عائشہ فرحین پر مجلسی کارکنوں نے حملہ کرکے انہیں زخمی کردیا اور اسے بدسلوکی بھی کی ۔ تفصیلات کے بموجب عائشہ فرحین جو حلقہ اسمبلی نامپلی کے کانگریس امیدوار فیروز خان کے حق میں انتخابی مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہی ہیں کو آج ریڈہلز کے علاقے شیرگلی میں نشانہ بنایا گیا ۔ بتایا جاتا ہے کہ 20 مجلسی کارکنوں کے گروپ نے عائشہ فرحین پر اُس وقت اچانک حملہ کردیا جب وہ اپنے ایک قریبی دوست سے ملنے کی غرض سے گئی تھی ۔ عائشہ فرحین نے فوری نامپلی پولیس اسٹیشن سے رجوع ہوکر حملے کے خلاف شکایت درج کروائی جہاں پر فیروز خاں بھی پہونچ گئے اور حملہ آوروں کے خلاف سخت کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا ۔ اسسٹنٹ کمشنر پولیس سیف آباد مسٹر سی وینو گوپال ریڈی نے بتایا کہ عائشہ فرحین کی شکایت پر دو مجلسی کارکن ٹلو ، مجو اور دیگر کے خلاف تعزیرات ہند کے دفعہ 354 (دست درازی) کے تحت ایک مقدمہ درج کیا گیا ہے اور تحقیقات جاری ہے ۔ انہوں نے کہا کہ خاتون کانگریس لیڈر کے خلاف بھی مجلسی کارکنوں نے شکایت کی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT