Tuesday , November 21 2017
Home / شہر کی خبریں / کانگریس سیاسی انحراف کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہوگی

کانگریس سیاسی انحراف کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہوگی

گاندھی بھون میں ماہرین قانون سے مشاورت ، اتم کمار ریڈی کی پریس کانفرنس
حیدرآباد ۔ 23 ۔ جون : ( سیاست نیوز ) : صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کیپٹن اتم کمار ریڈی نے سیاسی انحراف کے خلاف گاندھی بھون میں ماہرین قانون سے مشاورت کے بعد سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اس اجلاس میں قائد اپوزیشن تلنگانہ قانون ساز کونسل مسٹر محمد علی شبیر نائب صدور تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی مسز ڈی کے ارونا ، مسز سبیتا اندرا ریڈی ، سابق وزیر مسٹر ایم ششی دھر ریڈی کانگریس کے رکن اسمبلی مسٹر سمپت کمار ، ماہر قانون روی شنکر کے علاوہ دوسرے موجود تھے ۔ اجلاس کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیپٹن اتم کمار ریڈی نے کہا کہ چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر سیاسی مفادات کے لیے اپوزیشن جماعتوں کے منتخب عوامی نمائندوں کو نہ صرف انحراف کی ترغیب دے رہے ہیں بلکہ اس کی بھر پور مدافعت کرتے ہوئے غیر جمہوری طرز عمل اختیار کیے ہوئے ہیں ۔ سکریٹریٹ اور کیمپ آفس کو بھی سیاسی پلیٹ فارم میں تقسیم کردینے کا الزام عائد کیا ۔ اپوزیشن جماعتوں کے ٹکٹ پر ٹی آر ایس کو شکست دے کر کامیاب ہونے والے ارکان اسمبلی ارکان پارلیمنٹ اور ارکان قانون ساز کونسل کو سیاسی وفاداریاں تبدیل کرنے کی ترغیب دیتے ہوئے انہیں حکمران ٹی آر ایس میں شامل کررہے ہیں ۔ اس انحراف کے خلاف کانگریس پارٹی نے تمام جمہوری اداروں اور ان سے وابستہ شخصیتوں کے دروازوں پر دستک دی ہے ۔ لیکن افسوس کہ جمہوری اقدار کی پامالی کے باوجود ان اداروں سے کوئی مثبت ردعمل حاصل نہیں ہوا ۔ گاندھی بھون میں اجلاس طلب کرتے ہوئے سیاسی انحراف اور قانونی و جمہوری پہلوؤں پر غور کیا گیا ہے ۔ سپریم کورٹ کو 28 جون تک تعطیلات ہیں اس کے بعد سپریم کورٹ میں درخواست داخل کی جائے گی ۔ اس کے علاوہ اسپیکر لوک سبھا سے بھی کانگریس کے رکن پارلیمنٹ مسٹر جی سکھیندر ریڈی کی شکایت کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے اور ساتھ ہی ان کے خلاف سپریم کورٹ میں شکایت کی جائے گی ۔ مقصد میں کامیابی تک قانونی لڑائی جاری رکھنے کا کیپٹن اتم کمار ریڈی نے اعلان کیا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT