Saturday , December 16 2017
Home / جرائم و حادثات / کانگریس لیڈر پر حملہ کرنے والے دو روڈی شٹرس گرفتار

کانگریس لیڈر پر حملہ کرنے والے دو روڈی شٹرس گرفتار

دو طفنچے اور کارتوس برآمد ، ملزمین جیل منتقل
حیدرآباد ۔ /17 اگست (سیاست نیوز) بوئن پلی پولیس اور کمشنر ٹاسک فورس کی مشترکہ کارروائی میں کانگریس لیڈر پر قاتلانہ حملے میں ملوث خطرناک روڈی شیٹر ڈاکوری بابو اور اس کے بھانجے کے اومیش عرف سمن کو گرفتار کرلیا اور ان کے قبضے سے دو طفنچے اور کارتوس برآمد کرلئے ۔ ڈپٹی کمشنر پولیس نارتھ زون شریمتی بی سمتی نے بتایا کہ /13 اگست کو بوئن پلی کے مقامی کانگریس لیڈر بی یادگیری پر روڈی شیٹر نے دواخانہ کے احاطے میں فائرنگ کرکے زخمی کردیا تھا ۔ یہ واقعہ بوئن پلی کے ملکارجن نگر میں پیش آیا تھا اور روڈی شیٹر کی جانب سے دواخانہ میں فائرنگ کے سبب مریض خوفزدہ ہوگئے تھے جبکہ کانگریس لیڈر شدید زخمی ہوگئے ۔ انہوں نے بتایا کہ پولیس تحقیقات میں یہ پتہ لگا ہے کہ حشمت پیٹ الوال کے سروے نمبر 1 میں واقع اراضی سے متعلق یادگیری کا  تنازعہ چل رہا تھا ۔ روڈی شیٹر بابو کو یادگیری نے اراضی تنازعہ کے سلسلے میں شیوراج یادو کے قتل کے بعد انعام دینے کا وعدہ کیا تھا لیکن وہ اس سے قاصر رہا ۔ روڈی شیٹر بابو نے انتقامی کارروائی کے طور پر یادگیری کا قتل کرنے کا منصوبہ تیار کیا اور اس سلسلے میں اس نے دو دیسی ساختہ طفنچے بھی حاصل کئے جس کی مدد سے قاتلانہ حملہ کیا گیا ۔ پولیس نے دونوں ملزمین کو گرفتار کرلیا ہے ۔ ڈی سی پی نے مزید بتایا کہ الوال پولیس اسٹیشن کے روڈی شیٹر ڈی بابو ، قتل ، اقدام قتل ، مجرمانہ سازش ، جبراً وصولی اور دیگر سنگین دفعات کے تحت مختلف پولیس اسٹیشنوں میں درج کئے گئے مقدمات میں وہ مفرور ہے ۔ پولیس نے گرفتار روڈی شیٹر کو عدالت میں پیش کرتے ہوئے اسے جیل بھیج دیا ۔

TOPPOPULARRECENT