Tuesday , September 18 2018
Home / Top Stories / کانگریس پارٹی کی بس یاترا سے کے سی آر کے دل کی دھڑکنیں تیز

کانگریس پارٹی کی بس یاترا سے کے سی آر کے دل کی دھڑکنیں تیز

انٹلیجنس رپورٹ طلب، اتم کمار ریڈی کی عوام میں بڑھتی مقبولیت سے چیف منسٹر پریشان!

حیدرآباد۔/4 اپریل، ( سیاست نیوز) کانگریس پارٹی نے یکم اپریل سے تلنگانہ بھر میں بس یاترا پرگرام کا آغاز کیا اور بس یاترا پروگرام سے صدر پی سی سی اتم کمار ریڈی کو عوام کی تائید حاصل ہورہی ہے۔ راما گنڈم ضلع سے کانگریس پارٹی کے کارکنوں نے 8 ہزار سے زائد عوام کے ساتھ شرکت کرتے ہوئے اسے کامیاب بنایا۔ دوسرے مرحلہ کے تحت 2 اپریل کو ضلع بھوپل پلی سے مزید پارٹی کیڈر کو مضبوط کرتے ہوئے 18سے 19 ہزار لوگوں نے اس بس یاترا میں حصہ لیا۔ حلقہ اسمبلی پداپلی میں 20تا21 ہزار لوگوں نے اس بس یاترا میں شرکت کرتے ہوئے اسے کامیاب بنایا ہے۔ اتم کمار ریڈی کو اس بس یاترا کے ذریعہ بہت زیادہ مقبولیت حاصل ہورہی ہے جسے دیکھ کر چیف منسٹر کے سی آر حیرت زدہ ہوئے اور ان کے دل کی دھڑکنیں تیز ہوگئی ہیں۔ ذرائع کے مطابق چیف منسٹر کے سی آر نے فوری طور پر انٹلیجنس عہدیداروں کو احکامات جاری کرتے ہوئے کہا کہ کانگریس کی بس یاترا پر پوری رپورٹ جلد از جلد ان کے سامنے پیش کریں اور یہ بھی استفسار کیا کہ کانگریس پارٹی کی بس یاترا میں شرکت کرنے والے افراد کیا واقعی کانگریس پارٹی کے ارکان اور محبین ہیں یا پھر عوام کو پیسے دے کر اس یاترا میں شامل کیا جارہا ہے؟ ان سبھی باتوں پر انٹلیجنس کے عہدیدار ایک یا دو دن میں اپنی رپورٹ چیف منسٹر کو پیش کریں گے۔ کے سی آر اس بات پر بھی غور کررہے ہیں کہ ٹی آر ایس پارٹی کی جانب سے عوام کیلئے کئی ایک فلاحی اسکیمات کی منظوری دیئے جانے کے باوجود آخر کیوں وہ اپوزیشن کانگریس کی بس یاترا میں حصہ لے رہے ہیں اور جگہ جگہ اتم کمار ریڈی کا پرتپاک استقبال کرتے ہوئے ان کے چاہنے والے کے سی آر کی طرح اتم کمار ریڈی کو امام ضامن باندھ کر ان کی سلامتی اور ان کے حق میں دعا گو ہورہے ہیں۔ ورنگل کے اربن ضلع قاضی پیٹ، ہنمکنڈہ، کے ڈی سی گراؤنڈ میں 6 اپریل کو بڑے پیمانے پر بس یاترا کا انعقاد عمل میں لایا جائے گا اور شام میں جلسہ عام منعقد کیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT