Wednesday , October 17 2018
Home / ہندوستان / کانگریس کالادھن کی حمایت کررہی ہے :جاوڈیکر

کانگریس کالادھن کی حمایت کررہی ہے :جاوڈیکر

 

بنگالورو ۔ 8نومبر (سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی وزیرپرکاش جاوڈیکر نے الزام لگایا کہ کانگریس کالادھن کی حمایت کررہی ہے ۔ اسی لئے وہ ملک بھر میں”یوم سیاہ ” منارہی ہے تاہم بی جے پی گذشتہ سال آج ہی کے دن نوٹ بندی پر کامیابی سے عمل کے لئے مخالف یوم سیاہ منارہی ہے ۔ اس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ کانگریس کالے دھن اورکرپشن کے اداروں کی حمایت کررہی ہے ۔ ایک طرف بی جے پی جس نے رشوت خوری کے خلاف جنگ شروع کی ہے ‘ اس لعنت پر قابوپانے کے لئے کئی اقدامات کئے ہیں اور ایسی سرگرمیوں میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی کی جارہی ہے ۔ میڈیا سے بات کرتے ہوئے جاوڈیکر نے کہا کہ 37ہزار کمپنیوں کی نشاندہی کی ہے ۔ 2لاکھ کمپنیوں کا رجسٹریشن منسوخ کیا گیا ہے ۔ وزیر فروغ انسانی وسائل نے کہا کہ نوٹ بندی کے اعلان کے بعد ایک ہزار روپے اور 500روپے کی 15لاکھ کروڑ روپے کی کرنسی کا پتہ چلایا گیا ہے ۔ جاوڈیکر نے الزام لگایا ہے کہ کانگریس اور بی جے پی اگرچہ کہ دونوں سیاسی جماعتیں ہیں تاہم دونوں کے سیاسی کلچر کی یہ لڑائی ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ کانگریس نے اپنے دور میں کبھی بھی بے نامی جائیدادوں کا پتہ چلانے کے اقدامات نہیں کئے اور سپریم کورٹ کی ہدایت کے باوجود خصوصی جانچ ٹیم تشکیل نہیں دی ۔ اب بی جے پی نے خصوصی جانچ ٹیم کی تشکیل عمل میں لائی ہے اور 1200کروڑ روپے مالیت کی 400سے زائد جائیدادوں کو قرق کرلیا گیا۔

 

۔’’ 2018-19کے بجٹ میں عام آدمی کے مفاد میں اہم اعلانات متوقع‘‘
رشوت خوری کے خلاف اپنی جدوجہد کو جاری رکھتے ہوئے مرکز کی بی جے پی زیر قیادت این ڈی اے حکومت 2018-19کے بجٹ میں عام آدمی کے مفاد میں اہم اعلانات کرے گی۔ مرکزی وزیر فروغ انسانی وسائل پرکاش جاوڈیکر نے اس بات کا اشارہ دیا۔ انہو ں نے بنگالورو میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ راست طور پر فائدہ پہنچانے کی اسکیم کو مزید تقویت آئندہ بجٹ میں ملے گی۔ ڈیجٹل طور پر معاملت جس کی مقبولیت زیادہ ہورہی ہے اس سے کرپشن کے خاتمہ میں مدد ملے گی ۔ انہوں نے کہا کہ سابق وزیراعظم راجیو گاندھی یہ کہا کرتے تھے کہ جب دہلی سے میں دیہی استفادہ کنندگان کے لئے 100روپے بھیجتا ہوں تو اسے صرف 15روپے ہی حاصل ہوتے ہیں۔ وہ کانگریس کا دور تھا ۔ اب مودی جی 100روپے بھیجتے ہیں اور غریب کو اپنے بینک اکاونٹ میں 100روپے کی مکمل رقم حاصل ہوتی ہے۔ جاوڈیکر نے کہا کہ ڈیجٹل معاملت متعارف کرنے کے بعد 46ہزار کروڑ روپے کی بے قاعدگیوں کا خاتمہ کیا گیا۔
یہ دعوی کرتے ہوئے کہ نوٹ بندی کامیاب رہی ہے جاوڈیکر نے کہا کہ کانگریس مودی حکومت کی روز بروز بڑھتی مقبولیت کو ہضم نہیں کرپارہی ہے اور بی جے پی کے انسداد یوم کالادھن کو یوم سیاہ کے طور پر منارہی ہے جو یہ ظاہر کرتا ہے کہ کانگریس کالادھن کی بالواسطہ طور پر حمایتی ہے ۔ ” انہوں نے کہا کہ مودی حکومت نے نہ صرف رشوت خوری کے خلاف لڑائی لڑنے نوٹ بندی متعارف کی بلکہ کالادھن کے خاتمہ کے لئے 4قوانین بے نامی معاملتوں کی روک تھام کا ترمیمی بل ‘ کالادھن کے انکشاف کے لئے بیرونی آمدنی اور اثاثہ جات ٹیکس ا یکٹ 2005کا کالادھن کو روکنے کے لئے آغاز کیا۔ جاوڈیکر نے دعویٰ کیا کہ رشوت خوری کے خلاف جدوجہد کرنے مودی حکومت کے سخت اقدامات کے سلسلہ کے بعد غریب افراد جو کانگریس کے حمایتی تھے اب بی جے پی کی طرف آگئے ہیں۔ انہو ں نے کہا کہ بی جے پی نے کرپشن کے خلاف جدوجہد کی ہے ۔ اس نے سنگاپور ‘ قبرص اورسنگاپور کی روٹ سے آنے والے کالے دھن کا پتہ چلایا۔

 

TOPPOPULARRECENT