Wednesday , September 19 2018
Home / Top Stories / کانگریس کو اقتدار نہ ملنے پر سیاست سے سنیاس لینے تیار ہوں

کانگریس کو اقتدار نہ ملنے پر سیاست سے سنیاس لینے تیار ہوں

کے سی آر خاندان کو بھی چیلنج قبول کرنا چاہئے ۔ ہنمکنڈہ میں پرجا چیتنیہ یاترا کا جلسہ ۔ اتم کمار ریڈی کا خطاب
حیدرآباد /6 اپریل ( محمد نعیم وجاہت ) صدر تلنگانہ پردیش کانگریس اتم کمار ریڈی نے ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی آر ایس چیلنج کو دوبارہ قبول کرتے ہوئے کہا کہ کانگریس کو اقتدار حاصل نہ ہونے پر وہ اپنے ارکان خاندان کے ساتھ سیاست سے دستبردار ہوجائیں گے ۔ ٹی آر ایس کو اقتدار نہ ملنے پر کے سی آر کے ارکان خاندان کو سیاسی سنیاس لینے کا جوابی چیلنج کیا ۔ ریاست میں کانگریس کی بھاری اکثریت سے کامیابی کو یقینی قرار دیتے ہوئے کہا کہ ٹی آر ایس کو شرمناک شکست ہوگی ۔ ہنمکنڈہ میں پرجا چیتنیہ بس یاترا کے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے یہ بات بتائی ۔ جلسہ عام میں ہزاروں کی تعداد میں عوام سے کہا گیا کوئی بھی وعدہ چار سال میں پورا نہیں کیا گیا ۔ اُتم کمار ریڈی نے کہا کہ انہوں نے اخبارات میں ریاستی وزیر کے ٹی آر کا انہیں کیا گیا چیلنج دیکھ چکے ہیں وہ پہلے بھی کے ٹی آر کے چیلنج کو قبول کرچکے ہیں ۔ آج دوبارہ قبول کر رہے ہیں ۔ انہیں یقین ہے ریاست میں کانگریس بھاری اکثریت سے کامیابی حاصل کرے گی ۔ اگر کانگریس کو شکست ہوگئی تو وہ اپنی شریک حیات رکن اسمبلی پدماوتی ریڈی کے ساتھ سیاست میں کنارہ کشی اختیار کرلیں گے ۔ اگر ٹی آر ایس کو شکست ہوتی ہے تو چیف منسٹر کے سی آر کو اپنے ا رکان خاندان کے ساتھ سیاست سے دستبردار ہوجانے کا چیلنج کیا ۔ انہوں نے ریاست میں شیطانی راج چلنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کانگریس کیڈر کو شیطانی حکومت کا خاتمہ کرنے کمربستہ ہوجانے کا مشورہ دیا اور کہاکہ عوامی فنڈز پر پرتعیش زندگی گذارنے والا کے سی آر خاندان غریب عوام کے مسائل کو فراموش کرچکا ۔ ایسی حکومت کو اقتدار پر برقرار رہنے کا اخلاقی حق بھی نہیں ہے ۔ 4 ماہ میں مسلمانوں کو 12 فیصد مسلم تحفظات فراہم کرنے کا وعدہ کیا مگر ٹی آر ایس حکومت کے 4 سال مکمل ہونے کے باوجود مسلمانوں کو تحفظات فراہم نہیں کئے گئے ۔ غریب عوام کو ڈبل بیڈروم مکانات فراہم کرنے میں ناکام ہونے والے کے سی آر نے اپنے لئے 500 کرؤڑ کا عالیشان محل تعمیر کرلیا ۔ ٹی آر ایس حکومت تمام محاذوں میں ناکام ہوگئی ۔ عوامی مسائل کو اسمبلی اور کونسل میں اٹھانے سے روکنے بجٹ سیشن تک کانگریس ارکان کو معطل کیا گیا ۔ کومٹ ریڈی وینکٹ ریڈی اور سمپت کمار کی اسمبلی رکنیت منسوخ کردی گئی ۔ پرجا چیتنیہ بس یاترا کی کامیابی سے چیف منسٹر اور ان کا خاندان بوکھلاہٹ کا شکار ہوگیا ۔ کانگریس بس یاترا کے ذریعہ ٹی آر ایس حکومت کی ناکامیوں ، بدعنوانیوں و بے قاعدگیوں ، دغا بازی کو آشکار کر رہی ہے ۔ ضلع ورنگل کے مدھو سدن چاری نے غیر قانونی غیر دستوری فیصلہ کرکے عہدہ اسپیکر کے احترام کو پامال کیا ہے ۔ کے سی آر کا چیف منسٹر کے عہدے پر برقرار رہنا دستور اور جمہوریت دونوں کیلئے خطرہ ہے ۔ کے ٹی آر کویتا اور ہریش را وکے پیر زمین پر نہیں ہیں ۔ عوامی فنڈز پر مزے کر رہے ہیں ۔ عالیشان محلوں ، لکژری کاروں اور ہیلی کاپٹر میں گھوم رہے ہیں ۔ کے سی آر خاندان تکبر کا شکار ہوگیا ۔ ریاست کی ترقی اور عوام کی فلاح و بہبود کو نظر انداز کر دیا گیا ۔ 4 سال کے سی آر کا خاندان تلنگانہ کو لوٹ رہا ہے ۔ سنہرے تلنگانہ کا خواب شرمندہ تعبیر نہیں ہوا مگر کے سی آر کا خاندان خوشحال ہوگیا مشن بھاگیرتا مشین کاکتیہ ، اسکیمات سے کے سی آر کا خاندان کنٹراکٹر سے 6 فیصد کمیشن وصول کر رہا ہے ۔ مخالف عوام ایجنڈے پر خدمات انجام دینے والی ٹی آر ایس حکومت کو دفن کرنے تیار ہونے کا عوام کو مشورہ دیا ۔ کانگریس حکومت تشکیل پانے کے بعد یکمشت میں 2 لاکھ روپئے تک کسانوں کے قرض معاف کرنے کا وعدہ کیا ۔ سیلف ہیلپ گروپ کی خواتین کو ایک لاکھ روپئے ریوالونگ فنڈز دے10 لاکھ تک قرض دینے کا اعلان کیا ۔ بیروزگار نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کے ساتھ بیروزگار وں کو ماہانہ 3 ہزار روپئے بھتہ دینے کا اعلان کیا ۔
دو تا تین ماہ میں اخبار و ٹیلی ویژن کا آغاز
صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی اُتم کمار ریڈی نے کہا کہ کانگریس کی بس یاترا آج 25 اسمبلی حلقوں کا احاطہ کرچکی ہے ۔ سارے جلسے کامیاب ہوئے ہیں مگر میڈیا نے کانگریس کو اہمیت نہیں دی جبکہ کے سی آر خاندان کے جھوٹ کی بڑے پیمانے پر تشہیر ہو رہی ہے آئندہ دو یا تین ماہ میں کانگریس کا بھی اخبار اور ٹیلی ویژن آئے گا ۔ اُتم کمار ریڈی نے تب تک پارٹی کارکنوں کو سوشیل میڈیا کے پلیٹ فارم سے عوام تک کانگریس پارٹی کا پیغام پہونچانے کا مشورہ دیا ۔

TOPPOPULARRECENT