Wednesday , August 15 2018
Home / اضلاع کی خبریں / کانگریس کی بس یاترا فلاپ شو: کے ٹی آر

کانگریس کی بس یاترا فلاپ شو: کے ٹی آر

ناانصافیوں پر خاموش رہنے والے عوامی ہمدردی حاصل کرنے کی ناکام کوشش کررہے ہیں
سوریا پیٹ۔/7مارچ، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) وزیر اعلیٰ کے سی آر کے فرزند وزیر آئی ٹی و بلدی نظم و نسق کے ٹی آر نے ضلع سوریا پیٹ کا مصروف ترین طوفانی دورہ کیا۔ وزیر موصوف کا اندرون ہفتہ یہ دوسرا دورہ تھا۔ وزیر کے ٹی آر نے سوریا پیٹ میں بڑے سیوریج نالہ کا سنگ بنیاد رکھا۔ بعد ازاں کوداڑ کے بالاجی نگر میں ڈبل بیڈ روم کا سنگ بنیاد رکھا۔ اس موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر آئی ٹی کے ٹی آر نے کہا کہ ٹی آر ایس دور حکومت کے ساڑھے تین سال کانگریس و ٹی ڈی پی کے ساٹھ سال پر بھاری ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت نے وزیر اعلیٰ کے سی آر کی کامیاب قیادت میں صرف ساڑھے تین سال میں وہ کردکھایا جو کانگریس اور ٹی ڈی پی اپنے طویل دور حکمرانی میں نہیں کرپائے۔ وزیر موصوف نے اس موقع پر کانگریس کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ متحدہ ریاست میں تلنگانہ عوام کے ساتھ کی گئی آندھرائی حکمرانوں کی ناانصافیوں پر خاموش رہنے والے آج غلط پروپگنڈہ کرتے ہوئے عوام کی ہمدردیاں حاصل کرنے کی ناکام کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے کانگریس قائدین کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ عوام کیلئے شروع کئے جانے والے پراجکٹوں اور اسکیمات کے خلاف کانگریس قائدین روڑے اٹکارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کی بس یاترا مکمل فلاپ ہوچکی ہے عوام کی طرف سے کہیں بھی استقبال نہیں ہورہا ہے۔ کے ٹی آر نے اس موقع پر حکومت کی اسکیمات پر تفصیلی روشنی ڈالی اور کہا کہ معمرین کو ایک ہزار دیا جانے والا وظیفہ کانگریس حکومت میں دو سو اور ٹی ڈی پی حکومت میں 90 روپئے تھا جس میں ٹی آر ایس نے کئی فیصد اضافہ کیا۔ وزیر بلدی کے ٹی آر نے کوداڑ بلدیہ کے لئے پچاس کروڑ کا اعلان کیا۔ وزیر برقی جی جگدیش ریڈی نے وزیر اعلی کے چندر شیکھر راؤ اور وزیر بلدی کے ٹی آر کی سراہنا کرتے ہوئے شکریہ ادا کیا۔ اس موقع پر قانون ساز کونسل صدر نشین این ودیا ساگر، رکن لوک سبھا جی سکھیندر ریڈی، ضلع کلکٹر سرینوا موہن، ارکان اسمبلی جی کشور ، ویریشیم ، پربھاکر صدر نشین بلدیہ جی پرویلیکا پرکاش، پارٹی قائدین و کارکنوں کی کثیر تعداد موجود تھی۔

TOPPOPULARRECENT