Sunday , September 23 2018
Home / اضلاع کی خبریں / کانگریس کے سیاہ کرتوتوں کی لمبی فہرست ہے

کانگریس کے سیاہ کرتوتوں کی لمبی فہرست ہے

ٹی آر ایس کی مقبولیت کی وجہ سے ترقیاتی کاموں میں رکاوٹ ڈالی جارہی ہے: کے ٹی آر
کلواکرتی۔/8نومبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کلواکرتی بلدیہ چیرمین سری سیلم جنہوں نے کانگریس کے ٹکٹ پر وارڈ نمبر 9 سے مقابلہ کرتے ہوئے کامیابی حاصل کی تھی انہوں نے آج کئی افراد کے ہمراہ کثیر تعداد میں تلنگانہ بھون پہنچ کر وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی آر کی موجودگی میں ٹی آر ایس پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔ اس موقع پر کئی ایک وزراء اور لیڈرس نے بات کی جبکہ کے ٹی آر نے سابقہ حکومتوں کی کارکردگی پر سخت نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت اور بھی تیز رفتار ترقیاتی کام انجام دے سکتی تھی لیکن عوام میں ٹی آر ایس کی مقبولیت کو دیکھتے ہوئے کانگریس قائدین عدالتوں سے رجوع ہوکر ترقیاتی کاموں میں رکاوٹ ڈال رہے ہیں جس کے سبب ایک لاکھ 10ہزار جائیدادوں پر تقررات کو پُر کرنے میں دشواریاں ہورہی ہیں۔ اس طرح کئی ایک سیاہ کرتوتوں کی لمبی فہرست ہے جو کہ کانگریس پارٹی اور اس کے قائدین کی جانب سے کی جارہی ہے جس کا جواب عوام انہیں آنے والے 2019 کے انتخابات میں دیں گے۔ اس موقع پر انہوں نے سینکڑوں کی تعداد میں یہاں سے تلنگانہ بھون پہنچنے والے قائدین کو پارٹی کھنڈوا پہنایا۔ اس موقع پر وزیر پنچایت راج جوپلی کرشنا راؤ، نائب صدر پلاننگ کمیشن نرنجن ریڈی، وزیر صحت لکشما ریڈی، ایم پی محبوب نگر جتیندر ریڈی، ایم ایل سی کے آر نارائن ریڈی، ایم ایل اے گولا بالراج، سابق ایم پی ڈاکٹر جگناتھم، سابق ایم ایل اے جئے پال یادو، بالاجی سنگھ، مارکٹ چیرمین وجیتا ریڈی، کونسلرس محمد مقبول، گولی سرینواس ریڈی اور دیگر موجود تھے۔

 

TOPPOPULARRECENT