Friday , January 19 2018
Home / ہندوستان / کثرت میں وحدت ، ہندوستانی تہذیب کی روح

کثرت میں وحدت ، ہندوستانی تہذیب کی روح

نئی دہلی۔ 11 فروری (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان میں مذہبی رواداری کے بارے میں امریکہ کے صدر بارک اوباما کے ریمارکس کے چند دن بعد وزیر خارجہ سشما سوراج نے آج کہا کہ کثرت میں وحدت، عدم تشدد اور رواداری کے جذبہ نے ہندوستان کو دنیا کی ایک قدیم ترین اور مسلسل جاری و برقرار رہنے والی تہذیب بنادیا ہے۔ شریمتی سشما سوراج نے ہندوستانی برادری اور ت

نئی دہلی۔ 11 فروری (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان میں مذہبی رواداری کے بارے میں امریکہ کے صدر بارک اوباما کے ریمارکس کے چند دن بعد وزیر خارجہ سشما سوراج نے آج کہا کہ کثرت میں وحدت، عدم تشدد اور رواداری کے جذبہ نے ہندوستان کو دنیا کی ایک قدیم ترین اور مسلسل جاری و برقرار رہنے والی تہذیب بنادیا ہے۔ شریمتی سشما سوراج نے ہندوستانی برادری اور تہذیبی ورثہ: ماضی، حال اور مستقبل کے موضوع پر یہاں ایک بین الاقوامی کانفرنس کا افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ ’’ہندوستان کی روح اور جذبہ کیا ہے؟ میرا ایقان ہے کہ یہ دراصل ہندوستان کے بے پناہ کثیر معاشروں میں گہری وحدت ہے۔ یہ دراصل عدم تشدد اور رواداری پر مبنی ہماری روایات ہیں۔ یہ زمانہ قدیم کے نظریات ’’واسودائیوا کٹمبکم‘‘ (ساری دنیا ایک خاندان ہے) اور ’’سروا دھرما سمبھوا (تمام مذاہب و عقائد کا مساویانہ احترام ہے‘‘ ان ہی صدیوں نظریات اور اُصولوں نے ہندوستان کو دنیا کی ایک قدیم ترین، مسلسل برقرار اور جاری رہنے والی تہذیب بنادیا ہے۔ ان اُصولوں کی تاریخ پانچ ہزار سال قدیم ہے۔

انہوں نے کہا کہ دنیا کی کئی قدیم تہذیبیں ناپید اور فوت ہوچکی ہیں لیکن ہندوستانی تہذیب نہ صرف باقی و برقرار ہے بلکہ اپنے مالامال ورثے کے ساتھ فروغ پارہی ہیں‘‘۔ امریکہ کے صدر بارک اوباما نے حال ہی میں یہ بیان دیا تھا کہ ہندوستان میں مذہبی تصادم کے سبب عدم رواداری کے ایسے واقعات رونما ہورہے ہیں کہ مہاتما گاندھی بھی اگر ان واقعات کو دیکھتے تو سکتہ میں آجاتے تھے۔ شریمتی سشما سوراج نے کہا کہ سفارتی مشن کے سربراہان کی گزشتہ روز ختم شدہ کانفرنس کا حوالہ دیا جن میں ہندوستان کے 120 سفراء ار ہائی کمشنرس نے شرکت کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ لاکھوں ہندوستانی این آر آئیز اور ہندوستانی نژاد افراد کی شکل میں دنیا بھر میں ہندوستان کی نمائندگی کررہے ہیں اور وہ بیرونی ممالک میں بھی اپنے گھروں میں ہندوستانی تہذیبی جذبہ کو برقرار رکھا ہے۔

TOPPOPULARRECENT