Wednesday , June 20 2018
Home / شہر کی خبریں / کرایہ دار کیساتھ مکاندار کا غیر انسانی رویہ

کرایہ دار کیساتھ مکاندار کا غیر انسانی رویہ

نعش گھر منتقل کرنے کی عدم اجازت
حیدرآباد،10جون(یواین آئی)شہر حیدرآبادمیں ایک مکان مالک نے غیر انسانی رویہ کا اظہار کرتے ہوئے لاش کو گھرلانے سے کرائے دار کو روک دیا۔آندھراپردیش کے سریکاکلم کے رہنے والے راجو اور روہنی جوڑا اپنی 21سالہ بیٹی سواپنا کے ساتھ مل کر شہر حیدرآباد کے بورابنڈہ کے سائٹ ون علاقہ میں ایک مکان میں کرائے سے مقیم ہیں۔گھریلو مسائل کے سبب سواپنا نے پھانسی لے کر خودکشی کرلی۔لاش کو جب پوسٹ مارٹم کے بعد گھرمنتقل کیاجارہاتھا تو اسی دوران مکان مالک انجینلو نے لاش کو گھرمیں لانے سے روک دیا اور کہا کہ وہ کسی بھی صورت میں لاش کو ان کے گھر میں لانے کی اجازت نہیں دیں گے ۔اس پر پہلے ہی سے اپنی بیٹی کی موت کے صدمہ سے دوچار اس جوڑے کو ایک اور جھٹکہ لگا جنہوں نے مقامی افرد کی مدد سے مجبوری کے عالم میں لاش کو گھرلائے بغیر قریبی شمشان گھاٹ منتقل کیا جہاں اس کی آخری رسومات انجام دی گئیں تاہم اس واقعہ پر مقامی افراد نے مالک مکان پر شدید برہمی کااظہار کیا۔اس جوڑے نے اس خصوص میں پولیس سے شکایت کی۔

TOPPOPULARRECENT