Friday , January 19 2018
Home / ہندوستان / کرسمس پر گرجا گھروں کی سکیوریٹی میں اضافہ پر زور

کرسمس پر گرجا گھروں کی سکیوریٹی میں اضافہ پر زور

عیسائی وفد کی نمائندگی،علیگڑھ میں مذہبی تبدیلی پروگرام کے پیش نظر انتظامیہ چوکس

عیسائی وفد کی نمائندگی،علیگڑھ میں مذہبی تبدیلی پروگرام کے پیش نظر انتظامیہ چوکس
علیگڑھ 15 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) عیسائی برادری نے 25 ڈسمبر کو علیگڑھ کی ایک ہندو تنظیم کے قائدین کی جانب سے بڑے پیمانے پر مذہبی تبدیلی پروگرام کے انعقاد پر تشویش کا اظہار کیا اور شہر میں واقع گرجا گھروں کی خصوصی سکیوریٹی یقینی بنانے پر زور دیا۔ ڈی آئی جی علیگڑھ زون امیت اگروال نے بتایا کہ منتظمین کی جانب سے ’’گھر واپسی‘‘ پروگرام میں تبدیلی اور علیگڑھ و ہرتاز اضلاع کے مختلف دیہاتوں میں یہ پروگرام منعقد کرنے سے متعلق اطلاعات کے بعد انٹلی جنس کو مزید چوکس کردیا گیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ عیسائی فرقہ کے ارکان نے شہر کے مختلف مقامات پر واقع چرچس کو زائد سکیوریٹی فراہم کرنے کی خواہش کی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ کرسمس کے موقع پر چرچس کی سکیوریٹی یقینی بنانے پر زور دیا گیا ہے اور پولیس نے انہیں قانون کے تحت مکمل تحفظ کی یقین دہانی کرائی ہے۔اس دوران میتھوڈسٹ چرچ کے ریورنڈ جناتھن لال نے بتایا کہ حکمراں سماجوادی پارٹی نے عیسائی برادری کی مکمل تائید کا یقین دلایا ۔ کل حکمراں جماعت کے مقامی سرکردہ قائدین نے جناتھن لال سے ملاقات کی اور عیسائیوں کے تحفظ کیلئے ممکنہ اقدامات کا تیقن دیا ۔ جناتھن نے کہا کہ ضلع حکام کے سکیوریٹی اقدامات پر ہم مطمئن ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کرسمس کے موقع پر نام نہاد تبدیلی مذہب پروگرام ایک نامناسب حرکت ہے لیکن ہمیں یقین ہے کہ عوام کے تمام طبقات کی نیک تمناؤں کے ساتھ کرسمس پروگرام خوشگوار انداز میں اور پرامن طور پر منعقد ہوگا ۔ انہو ںنے ایک تنظیم کے 25 ڈسمبر کو بڑے پیمانے پر مذہبی تبدیلی پروگرام کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ضلع حکام نے گذشتہ ہفتہ فرقہ وارانہ منافرت پھیلانے والوں کو خبردار کیا ہے اور عوام سے بھی خواہش کی گئی ہے کہ وہ اشتعال انگیزی کا شکار نہ ہوں۔ کل شہر میں دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT