Sunday , December 17 2017
Home / شہر کی خبریں / کرشنا اور گوداوری پانی کیلئے انٹر کنکٹیڈ گرڈ کی تجویز

کرشنا اور گوداوری پانی کیلئے انٹر کنکٹیڈ گرڈ کی تجویز

حیدرآباد 19 ستمبر (سیاست نیوز) ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق کے ٹی راما راؤ نے گریٹر حیدرآباد میں دریائے کرشنا اور گوداوری کے پانی کے استعمال کے لئے انٹر کنکٹیڈ گرڈ کے قیام کا جائزہ لیتے ہوئے اندرون ایک ہفتہ رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی۔ اُنھوں نے آج بیگم پیٹ کیمپ آفس پر حیدرآباد میٹرو واٹر ورکس اور ایچ ایم ڈی اے عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس طلب کیا۔ اُنھوں نے دریائے کرشنا گوداوری کے پانی کو ایک ساتھ استعمال کرنے کے لئے انٹر کنکٹیڈ گرڈ کے قیام کا اعلیٰ سطح پر جائزہ لیتے ہوئے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی۔ اُنھوں نے کہاکہ فی الحال کرشنا طاس میں پانی کی قلت پائی جاتی ہے۔ اگر گرڈ کا قیام عمل میں لایا جائے تو مستقبل میں آؤٹر رنگ روڈ حدود میں واقع مواضعات کو پانی سربراہ کرنے میں دشواری نہیں ہوگی۔ اِس وقت آؤٹر رنگ روڈ علاقوں میں مانجرا کے ذریعہ پانی سربراہ کیا جارہا ہے۔ یہاں دریائے گوداوری کا پانی سربراہ کرنے کے لئے عصری رنگ مین کی تعمیرات پر خصوصی توجہ دینے کی اُنھوں نے عہدیداروں کو ہدایت دی۔ اُنھوں نے کہاکہ آبادی میں تیزی سے اضافہ کے پیش نظر پراجکٹس کے ڈیزائن تیار کئے جانے چاہئے۔ حیدرآباد میں پینے کے پانی کی سربراہی کو یقینی بنانے کے لئے تعمیر کئے جانے والے کیشو پورم ذخیرہ آب کے سلسلہ میں اُنھوں نے عہدیداروں سے تفصیلات طلب کی۔اُنھوں نے بتایا کہ اِس ذخیرہ آب میں ہمیشہ 20 ٹی ایم سی پانی کی گنجائش رہے گی۔

TOPPOPULARRECENT