Friday , January 19 2018
Home / اضلاع کی خبریں / کرناٹک میں اعلیٰ عہدہ داران کی کار کردگی سے چیف منسٹر سخت ناراض

کرناٹک میں اعلیٰ عہدہ داران کی کار کردگی سے چیف منسٹر سخت ناراض

بنگلور: /14 اکٹوبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) چیف منسٹر کرناٹک مسٹر سدرامیا نے ریاست کرناٹک کے اعلیٰ عہدہ داران کی کار کردگی پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ان کی کار کردگی اطمینان بخش نہ ہونے کے سبب عوام راست ان سے (چیف منسٹر ) سے ربط پیدا کرنے اور اپنی شکایات بیان کرنے کے لئے مجبور ہوگئے ہیں ۔ انھوں نے کہا کہ عہدہ داران بالا کی کارکردگی معیار

بنگلور: /14 اکٹوبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) چیف منسٹر کرناٹک مسٹر سدرامیا نے ریاست کرناٹک کے اعلیٰ عہدہ داران کی کار کردگی پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ان کی کار کردگی اطمینان بخش نہ ہونے کے سبب عوام راست ان سے (چیف منسٹر ) سے ربط پیدا کرنے اور اپنی شکایات بیان کرنے کے لئے مجبور ہوگئے ہیں ۔ انھوں نے کہا کہ عہدہ داران بالا کی کارکردگی معیاری نہ ہونے کے سبب لوگ ان سے راست طور پر ملنے کے لئے مجبور ہوئے ہیں۔ریاست بھر کے اعلیٰ عہدہ داران بشمول آئی اے ایس عہدہ داران کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے چیف منسٹر سدرامیا نے کہا کہ کئی ایک افراد ان تک اپنے مسائل لیکر پہنچ رہے ہیں جبکہ ہونا تو یہ چاہئے تھا کہ یہ مسائل دیہاتوںکی سطح پر یا تعلقہ کی سطح پر ہی حل کرلئے جاتے۔ چیف منسٹر نے کہاکہ اس طرح کا رویہ ناپسندیدہ ہے ۔عہدہ داران کو عوام دوست ہونا چاہئے اور ان کی ضرورتوں سے واقفیت حاصل کرتے ہوئے ان کے مسائل کو جڑ بنیاد سے حل کرنا چاہئے۔ لیکن ایسا نہیں ہوتا اور لوگوں کو مجبور کردیا جاتا ہے بنگلور جانے کے لئے ۔یہاں وہ اپنی درخواستوںکے لئے اپنا روپیہ پیسہ خرچ کرکے آتے ہیں ،پھر اپنا وقت اور توانائی لگاتے ہیں۔اپوزیشن جماعت بی جے پی الزام عائد کررہی ہے کہ برسر اقتدار کانگریس ایک غیر موثر انتظامیہ چلارہی ہے اور پھر عہدہ داران کی غفلت اور لاپرواہی کے سبب ترقیات پر منفی اثرات مرتب ہوچکے ہیں ۔ مسٹر سدرامیا نے عہدہ داران کو ہدایت دی کہ وہ خشک سالی اور سیلاب سے متاثرہ اضلاع میں امدادی خدمات کی انجام دہی میں موثر انداز میںکام کریں۔انھوں نے مختلف اضلاع اور علاقوں میں قدرتی آفات کے سبب پیدا ہونے والے حالات اور وہاں کئے جانے والے امدادی کاموں کا تفصیلی جائزہ لیا ۔ چیف منسٹر نے کہا کہ ریاست کے 9اضلاع میں جہاں خشک سالی کی صورت حال ہے وہیں دیگر کئی اضلاع میں زبردست بارش کے سبب فصلوںکو نقصان پہنچا ہے ۔چیف منسٹر نے عہدہ داران سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امدادی کاموںکی تکمیل کے لئے فنڈس کی کوئی کمی نہیں ہے۔لیکن وہ اس بات کو یقینی بنانا چاہتے ہیں کہ عہدہ داران ان کاموں کو موثر انداز میں انجام دیں تاکہ ضرورت مندوںکو ان کا صحیح فائیدہ پہنچ سکے۔ چیف منسٹر نے کہا کہ عہدہ داران کو ریت مافیا کے خلاف کارروائی کرنی چاہئے کیونکہ ریاست میں ریتی کی غیر قانونی طور پر نکاسی اورمنتقلی دیکھنے میں آرہی ہے۔ چیف منسٹر نے اعلیٰ عہدہ داران پر زور دیا کہ وہ ٹینک بیڈس اور دیگر سرکاری زمینوں پر غیر سماجی عناصر کی جانب سے ناجائز قبضوں کو ختم کروائیں ۔ ان معاملات کے لئے ڈپٹی کمشنرس کو ذمہ دار گردانا جائیگا۔ وزراء کرناتک مسٹر آر روشن بیگ، کے جے جارج ، چیف سیکریٹری کوشک مکھرجی۔مختلف محکمہ جات کے پرنسپل سیکریٹریز، ریجنل کمشنرس و ڈپٹی کمشنرس کے علاوہ ضلع پنچایتوں کے چیف ایکزیکیوٹیو آفیسرس نے اس اجلاس میں شرکت کی ۔

TOPPOPULARRECENT