Saturday , November 18 2017
Home / Top Stories / کرناٹک میں ایمنسٹی انٹرنیشنل کے دفتر میں اے بی وی پی کی توڑ پھوڑ، پولیس کارروائی میں چار کارکن زخمی

کرناٹک میں ایمنسٹی انٹرنیشنل کے دفتر میں اے بی وی پی کی توڑ پھوڑ، پولیس کارروائی میں چار کارکن زخمی

بنگلور، 19 اگست (سیاست ڈاٹ کام) بنگلور میں ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا کے دفتر میں آج زبردستی گھسنے کی کوشش کرتے ہوئے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی طلبہ یونٹ اکھل بھارتیہ ودیارتھی پریشد (اے بی وی پی) کے چار طلبہ پولیس کی کارروائی میں زخمی ہو گئے جبکہ تمام 40 طالب علموں کو گرفتار کر لیا گیا۔ اے بی وی پی کے کارکن غیر سرکاری تنظیم کے دفتر کو بند کرنے اور گزشتہ 13 اگست کو یونائٹیڈ تھیولوجیکل سوسائٹی میں منعقدہ ایک پروگرام کے دوران فوج کے خلاف مبینہ نعرے بازی کرنے والے افراد کو گرفتار کرنے کے مطالبے پر مظاہرہ کر رہے تھے ۔پولیس نے ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے اور اس واقعہ میں ملوث لوگوں کے خلاف بھی ایف آئی آر درج کی گئی ہے ۔ پولیس کی سست کارروائی سے غیر مطمئن اے بی وی پی کے کئی کارکنوں نے اپنے مظاہرے کو تیز کر دیا اور آج ایمنسٹی انٹرنیشنل انڈیا کے دفتر میں زبردستی داخل ہونے کی کوشش کرنے پر پولیس نے ان طالب علموں پر لاٹھی چارج کیا اور متعدد طالب علموں کو حراست میں لے لیا۔ ریاست کے وزیر داخلہ جی پرمیشور نے نامہ نگاروں سے کہا کہ پولیس نے ایف آئی آر درج کر لی ہے ۔ اس سلسلے میں تحقیقات کی جا رہی ہیں اور جب تک تفتیش مکمل نہیں ہو جاتی تب تک گرفتار لوگوں پر کارروائی نہیں کی جا سکتی۔ انہوں نے کہاکہ “ہم لوگ متنازعہ پروگرام کے منتظمین سے تفصیلی معلومات جمع کر رہے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ اس میں کسی نے بھی ہندوستانی فوج کے خلاف نعرے بازی نہیں کی ہے ۔ اس سلسلے میں تفصیلی تحقیقات کی جائے گی اور اس کے بعد ہی کارروائی کی جائے گی”۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT