Sunday , October 21 2018
Home / Top Stories / کرناٹک میں مستحکم حکومت و کانگریس سے دیرپا تعلقات کا عہد

کرناٹک میں مستحکم حکومت و کانگریس سے دیرپا تعلقات کا عہد

نامزد چیف منسٹر ایچ ڈی کمارا سوامی کا بیان ۔ دہلی میں یو پی اے صدر نشین سونیا گاندھی اور کانگریس صدر راہول گاندھی سے ملاقات

نئی دہلی 21 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) کرناٹک کے نامزد چیف منسٹر ایچ ڈی کمارا سوامی نے آج وعدہ کیا کہ کرناٹک میں ایک مستحکم حکومت فراہم کی جائیگی اور کانگریس کے ساتھ طویل مدتی تعلقات استوار کئے جائیں گے ۔ انہوںنے کانگریس قائدین سونیا گاندھی اور راہول گاندھی کو 23 مئی کو بنگلورو میں ہونے والی اپنی حلف برداری تقریب میں شرکت کیلئے مدعو بھی کیا ہے ۔ اعلی سطح کے ذرائع کے بموجب کانگریس ۔ جے ڈی ایس اتحاد ایک رابطہ کمیٹی قائم کریگا تاکہ کرناٹک میں اتحادی حکومت کے کام کاج کو پرسکون انداز میں آگے بڑھایا جاسکے ۔ اس کے علاوہ کہا گیا ہے کہ اسمبلی اسپیکر کانگریس کا ہوگا ۔ رابطہ کمیٹی میں پانچ تا چھ ارکان ہوسکتے ہیں۔ دونوں جماعتوں کی اعلی قیادت نے فیصلہ کیا ہے کہ ماضی کو پیچھے چھوڑتے ہوئے ایک نئی شروعات کی جائیگی ۔ ماضی میں دونوں جماعتیں اتحاد کرچکی ہیں اور پھر اختلافات کی وجہ سے دوریاں بھی ہوگئی تھیں۔ دونوں جماعتوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ اب طویل مدتی تعلقات کو فروغ دیا جائیگا۔ ذرائع نے بتایا کہ کانگریس قیادت یہ فیصلہ کل کریگی کہ پارٹی کا کونسا قائد ڈپٹی چیف منسٹر ہوگا جب دونوں جماعتوں کے قائدین کا بنگلورو میں اجلاس منعقد ہوگا جس میں اقتدار میں شراکت داری کے تعلق سے تبادلہ خیال ہوگا ۔ ذرائع نے کہا کہ 23 مئی کو ابتداء میں صرف چند وزرا ‘ چیف منسٹر کے ساتھ حلف لیں گے ۔ آئندہ دنوں میں دیگر تفصیلات کو قطعیت دی جائیگی ۔ تاہم اسپیکر کے عہدہ کیلئے اسی دن نام پیش کرنے ہونگے اس لئے کانگریس نے اس عہدہ پر اپنا دعوی پیش کیا ہے ۔ ایچ ڈی کمارا سوامی آج دہلی میں تھے جہاں انہوں نے یو پی اے کی صدر نشین سونیا گاندھی اور کانگریس کے صدر راہول گاندھی سے اظہار تشکر کیا کیونکہ انہوں نے کرناٹک میں جے ڈی ایس کی قیادت میں حکومت قائم کرنے کیلئے تائید فراہم کی ہے ۔ انہوں نے سونیا گاندھی اور راہول گاندھی دونوںکو تقریب حلف برداری میں شرکت کیلئے مدعو کیا ہے ۔ ذرائع نے کہا کہ کانگریس پارٹی نے دو ڈپٹی چیف منسٹروں کا فارمولا پیش کیا ہے تاکہ عددی اعتبار سے بڑی جماعت کے حق میں توازن برقرار رہ سکے ۔ تاہم کہا گیا ہے کہ جے ڈی ایس اس بات کے حق میں نہیں ہے ۔ ڈپٹی چیف منسٹر کے عہدہ کیلئے کرناٹک پردیش کانگریس صدر جی پرمیشور کا نام لیا جارہا ہے ۔ کمارا سوامی 12 سال میں دوسری مرتبہ چیف منسٹر کی حیثیت سے چہارشنبہ کو حلف لیں گے ۔ وہ آج دو پہر دہلی پہونچے تھے اور انہوں نے اپنی مصروفیات کا آغاز ماقبل انتخابات اتحادی جماعت بی ایس پی کی سربراہ مایاوتی سے ملاقات کرتے ہوئے کیا ۔ بی ایس پی کو کرناٹک میں ایک نشست پر کامیابی ملی ہے ۔ سونیا گاندھی اور راہول گاندھی سے 20 منٹ کی ملاقات میں سمجھا جارہا ہے کہ کمارا سوامی نے کابینہ کی تشکیل کے تعلق سے بات چیت کی ہے اور اس بات کا بھی جائزہ لیا کہ کانگریس کو کتنی وزارتیں دی جائیں گی اور کتنی وزارتیں جے ڈی ایس کی ہونگی ۔ یہ ملاقات راہول گاندھی کی قیامگاہ پر ہوئی تھی ۔ ذرائع کے بموجب ملاقات کے دوران کمارا سوامی نے وعدہ کیا کہ وہ کرناٹک میں بہتر حکمرانی فراہم کرینگے اور وہ اہم مسائل پر راہول گاندھی کی رائے بھی حاصل کرینگے ۔ کانگریس صدر نے بھی دونوں جماعتوں کے مابین طویل مدتی تعلقات کیلئے کانگریس کی جانب سے مکمل تائید کی فراہمی کا تیقن دیا ۔ کمارا سوامی نے اس ملاقات سے قبل کہا تھا کہ وزارتوں کیلئے کوئی سودے بازی نہیں ہوگی ۔ ہم خوشگوار انداز میں آگے بڑھیں گے ۔ ہم کو مل کر کام کرنا ہے ۔ وہ یہاں کانگریس قائدین سے مشورہ کیلئے آئے ہیں۔ ملاقات کے بعد کمارا سوامی نے کہا کہ انہوں نے سونیا گاندھی اور راہول گاندھی کو حلف برداری کیلئے مدعو کیا ہے ۔ قیاس کیا جارہا ہے کہ کمارا سوامی اپنی حلف برداری کے اندرون 24 گھنٹے اسمبلی میں اپنی اکثریت ثابت کردکھائیں گے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT