Saturday , June 23 2018
Home / شہر کی خبریں / کرناٹک میں 28 ہزار اساتذہ کی جائدادیں مخلوعہ

کرناٹک میں 28 ہزار اساتذہ کی جائدادیں مخلوعہ

وزیر پرائمری و ہائی اسکول تعلیم کے رتناکر کا خطاب

وزیر پرائمری و ہائی اسکول تعلیم کے رتناکر کا خطاب
بیدر /24 اگست (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ریاست میں 28 ہزار ٹیچرس کے عہدے خالی ہیں۔ وزیر پرائمری اور ہائی اسکول تعلیم مسٹر کے رتناکر نے یہ بات بتائی۔ کنڑا ساہتیہ پریشد میں منعقدہ ایک تقریب کو مخاطب کرتے ہوئے وزیر تعلیم نے بتایا کہ 11,500 ٹیچرس کے تقررات کے لئے محکمہ فینانس نے منظوری دی ہے۔ پرائمری ہائی اسکول اور پری یونیورسٹی کالجس کے ٹیچرس اور لکچررس جائدادوں پر تقررات کئے جائیں گے۔ بطور زائد 5 ہزار ٹیچرس تقررات کے لئے چیف منسٹر کرناٹک سدرامیا نے منظوری دی ہے۔ علاقہ حیدرآباد کرناٹک کو ریزرویشن طے کرنے کے مسئلہ کو لے کر تاخیر ہوئی ہے، اسی وجہ سے تقررات میں تاخیر ہوئی ہے۔ اسکول ٹیچرس اہلیت امتحان میں 22 ہزار سے زائد افراد پاس ہوئے ہیں، انھیں دوبارہ انٹرنس امتحان منعقد کرکے 9,500 ٹیچرس کے تقررات کئے جائیں گے۔ وزیر تعلیم نے پروگرام کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں میڈیم کے تعلق سے سپریم کورٹ نے جو فیصلہ دیا ہے، اس سے علاقائی زبانوں کو نقصان ہو رہا ہے، جس کے پیش نظر تمام ریاستوں کو چاہئے کہ مساوی لینگویج پالیسی پر عمل آوری کی جائے۔ تعلیمی پالیسی پر غور و خوض کے لئے تمام ریاستوں کے چیف منسٹرس کی میٹنگ طلب کرنے ہمارے چیف منسٹر سدرامیا نے وزیر اعظم کے نام مکتوب تحریر کیا ہے۔ اسی طرح تمام چیف منسٹرس کو بھی مکتوب روانہ کئے گئے ہیں۔ کنڑا ساہتیہ پریشد کے صدر نے مخاطب کرتے ہوئے مطالبہ کیا کہ کنڑا میڈیم میں تعلیم حاصل کرنے والوں کو سرکاری ملازمتوں میں 59 فیصد ریزرویشن دیا جائے۔ تعلیم میں بھی کنڑا میڈیم کے لئے زیادہ اہمیت دینے قانون میں ترمیم کی جائے۔

TOPPOPULARRECENT