کرنی سینا ، فلم پدماوت کے خلاف احتجاج سے دستبردار

راجستھان انتخابات کے لیے ڈرامہ تھا ، فلم میں راجپوتوں کا درجہ بلند بتایا گیا
جئے پور ۔ 3 ۔ فروری : ( سیاست ڈاٹ کام ) : شری راجپوت کرنی سینا نے سنجے لیلا بنسالی کی فلم پدماوت کے خلاف اپنے احتجاج سے دستبردار ہونے کا اعلان کیا اور کہا کہ اس فلم میں راجپوتوں کے وقار کو بلند کیا گیا ہے ۔ شری راشٹریہ راجپوت کرنی سینا کے ممبئی لیڈر یوگیندر سنگھ کھر نے کہا کہ اس تنظیم کے صدر سکھدیو سنگھ گوگا مدی کی ہدایت پر چند ارکان نے ممبئی میں فلم دیکھی اور یہ دیکھ کر اطمینان ہوا کہ فلم میں راجپوت کی قربانیوں اور اس کے وقار کو خوبصورت پروقار انداز میں پیش کیا گیا ۔ فلم دیکھنے کے بعد ہم کو فخر ہونے لگا ہے ۔ اس فلم میں دہلی سلطنت کے حکمراں علاء الدین خلجی اور مہارانی پدمنی کے درمیان ایسا کوئی قابل اعتراض منظر نہیں ہے ۔ کرنی سینا نے اس فلم کے ریلیز ہونے سے قبل ہی شدید احتجاج کرتے ہوئے فلم پر پابندی کا مطالبہ کیا تھا ۔ کرنی سینا کے اس فیصلہ کے بعد جگہ جگہ پر تشدد واقعات ہوئے تھے لیکن اب اس نے فلم کے خلاف احتجاج سے دستبردار اختیار کرلی ۔ اس اعلان کے بعد ٹوئیٹر پر ریمارکس پوسٹ کیے جارہے ہیں کہا جارہا ہے کہ کرنی سینا کا یہ احتجاج دراصل راجستھان میں بی جے پی کو کامیاب بنانے کے لیے ایک ڈرامہ تھا ، عمداً بی جے پی کی ناکامیوں اور مرکز کی مودی حکومت کی خرابیوں پر پردہ ڈالنے کے لیے یہ ڈرامہ رچا گیا ۔ لیکن اس کوشش کے باوجود راجستھان ضمنی انتخابات میں بی جے پی کو بری طرح شکست ہوگئی ۔۔

TOPPOPULARRECENT