کرن کمار ریڈی نے چیف منسٹر کیمپ آفس کا تخلیہ کردیا

حیدرآباد۔/19 فروری(سیاست نیوز) سابق چیف منسٹر مسٹر این کرن کمار ریڈی نے لوک سبھا میں تشکیل تلنگانہ بل کی منظوری کے خلاف بطور احتجاج وزارت اعلیٰ، رکن اسمبلی کے عہدوں اور کانگریس پارٹی کی رکنیت سے آج استعفیٰ دینے کے اعلان کے اندرون 9 گھنٹے اپنی سرکاری رہائش گاہ ’چیف منسٹرس کیمپ آفس‘ موقوعہ بیگم پیٹ کا تخلیہ کرتے ہوئے بنجارہ ہلز می

حیدرآباد۔/19 فروری(سیاست نیوز) سابق چیف منسٹر مسٹر این کرن کمار ریڈی نے لوک سبھا میں تشکیل تلنگانہ بل کی منظوری کے خلاف بطور احتجاج وزارت اعلیٰ، رکن اسمبلی کے عہدوں اور کانگریس پارٹی کی رکنیت سے آج استعفیٰ دینے کے اعلان کے اندرون 9 گھنٹے اپنی سرکاری رہائش گاہ ’چیف منسٹرس کیمپ آفس‘ موقوعہ بیگم پیٹ کا تخلیہ کرتے ہوئے بنجارہ ہلز میں واقع اپنی نجی رہائش گاہ منتقل ہوگئے۔ مسٹر کرن کمار ریڈی نے جو ایسا لگتا ہے سرکاری رہائش گاہ کا تخلیہ کردینے کا بہت پہلے ہی تہیہ کرچکے تھے مستعفی ہونے کے چند گھنٹوں میں ہی منتقلی کی کارروائی کو مکمل کرلیا۔ سابق چیف منسٹر جو کل تک اپنے کابینی رفقاء اور پارٹی قائدین سے مشاورت میں مصروف رہے تھے آج گورنر مسٹر ای ایس ایل نرسمہن سے راج بھون میں ملاقات کرتے ہوئے اپنا مکتوب استعفیٰ حوالہ کردیا تھا۔ گورنر نے چیف منسٹر کے مکتوب استعفیٰ کی موصولی کے چند گھنٹوں بعد تلگو دیشم سربراہ و قائد اپوزیشن مسٹر این چندرا بابو نائیڈو، قائد مقننہ وائی ایس آر کانگریس پارٹی مسز وجیئماں اور سربراہ تلنگانہ راشٹرا سمیتی مسٹر کے چندر شیکھر راؤ اور دیگر قائدین کو مسٹر کرن کمار ریڈی کے مستعفی ہوجانے کی اطلاع دی۔

سیما آندھرا کیلئے ریاپڈ ایکشن فورس
حیدرآباد۔/19فبروری، ( پی ٹی آئی) تلنگانہ ریاست کے قیام کے خلاف سیما آندھرا میں جاری احتجاج کو پیش نظر رکھتے ہوئے لاء اینڈ آرڈرکی صورتحال پر قابو پانے ریاپڈ ایکشن فورس کی دو کمپنیوں کو سیما آندھرا روانہ کیا گیا ہے۔ ایک کمپنی تروپتی میں تعینات رہے گی اور دوسری کمپنی کو کڑپہ میں تعینات کیا جارہا ہے جہاں تلنگانہ کے خلاف احتجاج جاری ہے۔

گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن کے 34عہدیداروں کے تبادلے
حیدرآباد۔/19فبروری، ( سیاست نیوز) کمشنر گریٹر حیدرآباد میونسپل کارپوریشن مسٹر سومیش کمار نے آج انتظامی بنیادوں اور عام انتخابات 2014 کے پیش نظر 34ایڈیشنل چیف سٹی پلانرس، سٹی پلانرس اور اسسٹنٹ سٹی پلانرس کے تبادلے اور تعیناتی کے احکام جاری کئے جن کا اطلاق فوری اثر کے ساتھ ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT