Tuesday , October 16 2018
Home / کھیل کی خبریں / کرپشن کیس:گھانا فٹبال اسوسی ایشن تحلیل

کرپشن کیس:گھانا فٹبال اسوسی ایشن تحلیل

آکرہ۔9 جون(سیاست ڈاٹ کام)گھانا نے ریفریز اور اعلی عہدیداروں کو تحائف اور رشوت لیے جانے کا اسکینڈل منظرعام پر آنے کے بعد ملکی فٹبال اسوسی ایشن کو ہی تحلیل کردیا ہے۔گزشتہ دنوں اسٹنگ آپریشن میں یہ راز فاش کیاگیا تھا جس کے بعد وزیر اطلاعات مصطفیٰ عبدالحامد نے کہا کہ حکومت نے اسکینڈل سامنے آنے پر فوری کارروائی کرتے ہوئے گھانا فٹبال اسوسی ایشن کو تحلیل کردیا ہے۔طویل عرصے سے تیار انڈر کور دستاویزی فلم گذشتہ دنوں میڈیا میں پیش کی گئی تھی، جس میں خفیہ کیمروں کے ذریعے ریفریز کو 100 ڈالر فی میچ رشوت لیتے ہوئے دکھایاگیا، اسی میں مذکورہ رپورٹر سے جی ایف اے کے صدر کیویسی نیان ٹیکی کی جانب سے حکومتی کنٹریکٹس دیے جانے کے عوض 11 ملین ڈالرطلب کیے گئے تھے۔وزیر اطلاعات نے مزید کہا کہ معاملے کی مکمل چھان بین کرنے کے بعد ذمے داروں کیخلاف مزید کارروائی کی جائے گی۔ گھانا کی حکومت نے اس بابت سی اے ایف اور فیفا کو بھی مطلع کردیا ہے۔دوسری جانب فیفا کی فیصلہ ساز کونسل نے گھانا فٹبال کے سابق چیف کیواسی نیان ٹیکی پر 90 یوم کی پابندی عائد کردی۔ وہ زیر تفتیش ہونے کی بنیاد پر معطل کیے گئے اور ان کیخلاف ایتھکس قواعد کی خلاف ورزی پر کارروائی بھی کی جاسکتی ہے۔ اس سے قبل گھانا کی حکومت نے ملکی فٹبال باڈی ( جی ایف اے ) کو تحلیل کردیا تھا، اس سے قبل دستاویزی فلم نشر ہونے پر کیواسی نے کئی بار درخواست کیے جانے کے باوجود کوئی رائے نہیں دی تھی تاہم جی ایف اے کی جانب سے تحلیل کیے جانے سے پہلے تحقیقات میں مکمل تعاون کرنے کاعزم ظاہر کیاگیا تھا۔کیواسی 2005 سے جی ایف اے کے صدر منتخب ہوتے چلے آرہے تھے اور انھیں ستمبر2016 میں فیفا کونسل بھی شامل کیاگیا تھا، اس کے علاوہ فیفا نے گھانا حکومت کی جانب سے جی ایف اے تحلیل کیے جانے پر کسی بھی ممکنہ کارروائی پر کوئی رائے نہیں دی۔واضح رہے کہ عالمی گورننگ باڈی کسی بھی تیسرے فریق کو ملکی فٹبال کے معاملات میں قبول نہیں کرتی ہے، جس میں حکومتی مداخلت پر رکن اسوسی ایشن کی رکنیت معطل کردی جاتی ہے۔

TOPPOPULARRECENT