Monday , December 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / کسانوں کو اِنصاف دلانے کا تیقن

کسانوں کو اِنصاف دلانے کا تیقن

نندیال کے موضع میں بھروسہ یاترا سے جگن موہن ریڈی کا خطاب

نندیال۔ 12 جنوری (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) وائی ایس آر پارٹی کے صدر جگن موہن ریڈی نے اس ماہ کی 5 تاریخ سے کل تک شری شیلم حلقہ اسمبلی کے بہت سے گاؤں میں کسان بھروسہ یاترا کی کل شام نندیال کی گاجلہ پلی گاؤں میں منعقدہ جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے جگن موہن ریڈی نے کہا کہ چندرا بابو نائیڈو نے انتخابات سے پہلے جو وعدہ کسانوں سے کیا تھا، ان کو حل کرنے میں وہ ناکام رہے۔ جگن اپنی یاترا 5 جنوری کو شری سیلم سے شروع کی اور کل نندیال کے گاجلہ پلی میں اس کا اختتام ہوا۔ جگن نے شری سیلم میں کسانوں سے مل کر ان کے حالات کا جائزہ لیا اور وہاں ایک اجلاس کو خطاب کیا۔ اس طرح آتماکور، ویلگوڑ، عبداللہ پرم، ویلپنور کے گاؤں میں کسانوں سے ملا اور ان کے جنگلات جاکر فصلوں کا معائنہ کیا اور ان گاؤں میں جو کسان خودکشی کرچکے ہیں، ان کے اہل و احباب سے مل کر ان کی مدد کرنے کا وعدہ کیا۔ پورے شری شیلم حلقہ اسمبلی میں 40 کسان خودکشی کرچکے ہیں۔ جگن موہن ریڈی ان سبھی کسانوں کے گھر گئے اور ان کو انصاف دلانا کا وعدہ کیا۔ کل اس بیچ بنڈہ آتماکور، لنگاپورم، جوٹور وغیرہ قریوں کا دورہ بھی کیا۔ کل نندیال کے قریبی دیہات جو مہانندی منڈل میں آتے ہیں، جسے مہانندی بکاپورم، تماپورم، مہادیو پورم اور آخر گاجلہ پلی میں ایک جلسہ عام منعقد کیا گیا جس میں ہزاروں کی تعداد میں لوگ جمع تھے۔ اس اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جگن نے کہا کہ میں نے شری شلم کے اسمبلی حلقہ کا پورا دورہ کیا اور بہت سے کسانوں سے ملا اور کئی فصلوں کا معائنہ بھی کیا۔ آج بابو حکومت کسانوں کی فصلوں کے صحیح دام دینے میں ناکام ہے۔ اس لئے کسانوں کو نقصان اٹھانا پڑتا ہے۔ اس لئے نائیڈو کو ’’بنگال کی کھاڑی ‘‘میں ڈھکیل دیں۔ جگن کی اس کسان بھروسہ یاترا سے قریوں کے کسان بہت متاثر ہوئے اور لوگوں میں یہ بھی سنا جارہا ہے کہ جگن کی اس یاترا سے آنے والے انتخابات میں جگن کو فائدہ

TOPPOPULARRECENT