Sunday , November 19 2017
Home / Top Stories / کشمیر میں بدامنی کیلئے پاکستان ذمہ دار

کشمیر میں بدامنی کیلئے پاکستان ذمہ دار

ایک ملک کا دہشت گرد دوسرے ملک میں ہیرو نہیں ہوسکتا : راج ناتھ سنگھ
شاہجہاں پور (اترپردیش)۔ 20 اگست (سیاست ڈاٹ کام) مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے کشمیر میں جاری بدامنی پر پاکستان کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے کہا کہ وہ (پاکستان) وادی میں امن کو متاثر کرنے کی مسلسل کوشش کررہا ہے۔ راج ناتھ سنگھ نے ترنگا ریالی سے خطاب کرتے ہوئے کہا آج انہیں یہ کہتے ہوئے کوئی پس و پیش نہیں ہے کہ پاکستان مسلسل کشمیر میں بدامنی پیدا کرنے کی کوشش کررہا ہے۔ وہ اسے تباہ کرنا چاہتا ہے اور وادی میں امن کو درہم برہم کررہا ہے۔ راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ حال ہی میں وہ پاکستان گئے تھے، اور آپ سب جانتے ہیں کہ ہمارے پڑوسی ملک نے کیا برتاؤ کیا۔ وہاں جو کچھ ہوا، اس کا وہ اعادہ کرنا نہیں چاہتے، لیکن یہ بات واضح طور پر کہنا چاہتے ہیں کہ وہ ہندوستان کے فخر کو نیچا ہونے نہیں دیں گے۔ راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ ایک ملک کا دہشت گرد کسی دوسرے ملک کا ہیرو نہیں ہوسکتا۔ وہ کشمیر کے عوام سے یہ کہنا چاہتے ہیں کہ ہم نہ صرف کشمیر کی زمین سے بلکہ عوام سے بھی محبت کرتے ہیں۔ وہ کشمیری عوام سے یہ کہیں گے کہ ہم ان کے ہاتھوں میں پتھر، اینٹ اور آتشیں اسلحہ نہیں بلکہ قلم، کمپیوٹر اور ملازمتیں دیکھنا چاہتے ہیں۔ ہماری خواہش ہے کہ آپ روزگار سے مربوط ہوں۔ راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ پرتشدد احتجاج کسی مخصوص مسئلہ کا حل نہیں ہوسکتا۔ پہلے امن ہونا چاہئے، اس کے بعد مختلف مسائل کو بات چیت کے ذریعہ حل کیا جاسکتا ہے۔ بعض لوگ ہندو، مسلمان، عیسائی اور پارسیوں کے درمیان نفرت پیدا کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے برطانوی حکمرانوں کی ’’پھوٹ ڈالو، حکومت کرو‘‘ پالیسی اختیار کررکھی ہے لیکن وہ بری طرح ناکام رہے۔ راج ناتھ سنگھ نے کہا کہ کوئی بھی ہندوستان کے عوام کو تقسیم نہیں کرسکتا۔ اگر عوام ہندوستان کو ایک عظیم ملک بنانا چاہتے ہیں تو یہاں کے ہر شہری کو بلالحاظ فرقہ، نسل و مذہب ترقی میں رول ادا کرنا ہوگا اور سب کے ساتھ مل کر آگے بڑھنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ انگریزوں نے مذہبی خطوط پر تقسیم کی کوشش کی لیکن ان کی یہ ناپاک کوششیں مجاہدین آزادی اشفاق اللہ خاں اور رام پرساد بسمل کی دوستی نے ناکام بنادی۔

TOPPOPULARRECENT