Sunday , September 23 2018
Home / ہندوستان / کشمیر میں سلامتی کے پیش نظر ریل خدمات ملتوی

کشمیر میں سلامتی کے پیش نظر ریل خدمات ملتوی

سری نگر ، 20 دسمبر (یو این آئی) بند اور مظاہروں کی وجہ سے آج لگاتار دوسرے دن بھی سلامتی کے پیش نظر ریل خدمات ملتوی رہیں۔ وادی کشمیر میں گذشتہ 8 دنوں کے دوران سیکورٹی فورسز کے ہاتھوں ہونے والی تین شہری ہلاکتوں کے خلاف بدھ کے روز کہیں مکمل تو کہیں جزوی ہڑتال دیکھنے میں آئی۔ جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان اور شمالی کشمیر کے ضلع کپواڑہ جہاں یہ تین ہلاکتیں رونما ہوئی ہیں، میں احتجاج کے طور پر مکمل ہڑتال کی گئی۔ کشمیری علیحدگی پسند قیادت سید علی گیلانی، میرواعظ مولوی عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے یہ کہتے ہوئے حالیہ شہری ہلاکتوں کے خلاف ہڑتال کی کال دی تھی کہ کشمیر کو ایک قتل گاہ میں تبدیل کردیا گیا ہے جہاں کسی کی زندگی محفوظ نہیں ہے ۔ انتظامیہ نے ہڑتال کے دوران احتجاجی مظاہروں کے خدشے کے پیش نظر نہ صرف سری نگر کے سات پولیس تھانوں ایم آر گنج، صفا کدل، نوہٹہ ، خانیار، رعناواری ، کرال کڈھ اور مائسمہ میں بندشیں عائد کررکھیں بلکہ کشمیر میں چلنے والی ریل خدمات بھی معطل کررکھیں۔ شوپیان کے بٹہ مرن میں مسلح تصادم کے پیش نظر سری نگر اور جموں خطہ کے بانہال کے درمیان براستہ جنوبی کشمیر ریل خدمات منگل کی صبح معطل کی گئی تھیں اور اس طرح سے بدھ کو دوسرے دن بھی معطل رہیں۔

TOPPOPULARRECENT