Thursday , December 14 2017
Home / ہندوستان / کشمیر پر کُل جماعتی میٹنگ بے نتیجہ اور ناکام

کشمیر پر کُل جماعتی میٹنگ بے نتیجہ اور ناکام

ویلفیر پارٹی آف انڈیا کا الزام
نئی دہلی۔/16اگسٹ، ( سیاست ڈاٹ کام ) ویلفیر پارٹی آف انڈیا نے وزیر اعظم نریندر مودی کی صدارت میں کل جماعتی میٹنگ کا خیرمقدم کرتے ہوئے اسے بے نتیجہ اور ناکام بتایا۔ ویلفیر پارٹی کے قومی صدر ڈاکٹر سید قاسم رسول الیاس نے کہا کہ کشمیریوں کے زخموں پر مرہم رکھنے اور حالات سے پریشان و مضطرب اور ناراض کشمیر یوں کو کوئی واضح اور مثبت پیام دینے میں آل پارٹی میٹنگ بری طرح ناکام رہی ہے۔ انہوں نے ایک صحافتی بیان میں کہا کہ یہ ایک خوش آئند بات ہے کہ وزیر اعظم نے کل جماعتی میٹنگ کی صدارت کی اور تمام شرکاء کے خیالات کو سنجیدگی سے سنا۔اسی طرح یہ بات بھی اہم ہے کہ اس میٹنگ نے پاکستان کو ایک واضح اور ٹھوس پیغام دیا کہ وہ ہندوستان کے اندرونی معاملات میں مدالت سے باز آئے لیکن رنجیدہ و غم خوردہ کشمیری عوام کے زخموں پر مرہم رکھنے کے لئے میٹنگ میں کوئی واضح لائحہ عمل نہ طئے کرکے یہ غلط پیغام دیا کہ بی جے پی کی قیادت میں قائم مرکزی حکومت کشمیر کی زمین سے تو دلچسپی رکھتی ہے لیکن کشمیریوں کے مسائل سے اسے کوئی دلچسپی نہیں ہے۔ افسوس کہ میٹنگ میں متاثرہ ریاست کا دورہ کرنے کے لئے کسی کل جماعتی وفد کا بھی اعلان نہیں کیا گیا۔ کل جماعتی میٹنگ کشمیر کی دھماکہ خیز صورتحال کا اندازہ لگانے میں بھی ناکام رہی جہاں گاؤں کے تمام لوگ بشمول عورتیں اور بچے کرفیو کی خلاف ورزی کرکے نہتے سڑکوں پر نکل کر سیکورٹی فورسیس کے سامنے سینہ سپر ہوجاتے ہیں۔ کم از کم اگر سیکورٹی فورسیس کو یہ پیغام دیا جاتا کہ وہ پلیٹ گنوں کا استعمال بند کرے اور طاقت کو غیر ضروری استعمال نہ کرے تو وہ بھی ایک مثبت پیش قدمی ہوتی۔ افسوس کہ کل جماعتی میٹنگ اس کی جرأت و حوصلہ بھی نہیں رکھ سکی۔ویلفیر پارٹی آف انڈیا کا احساس ہے کہ اس وقت علامتی طریقوں اور بیان بازیوں سے آگے بڑھ کر ٹھوس اور ہمدردانہ اقدامات کی ضرورت ہے۔ ویلفیر پارٹی مطالبہ کرتی ہے کہ کشمیر کے تمام اہم افراد اور جماعتوں سے بلا تاخیر بات کی جائے۔

TOPPOPULARRECENT