Tuesday , November 21 2017
Home / ہندوستان / کشمیر کو فوج نہیں ڈاکٹرس بھیجے جائیں : یوسف تریگامی

کشمیر کو فوج نہیں ڈاکٹرس بھیجے جائیں : یوسف تریگامی

سرینگر 12 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی حکومت کو چاہئے تھا کہ وہ وادی کشمیر میں جاری تشدد کے پیش نظر وہاں مرکزی نیم فوجی دستوں کی بجائے ڈاکٹرس اور ادویات روانہ کرتی ۔ سی پی ایم کے رکن اسمبلی یوسف تریگامی نے یہ بات کہی ۔ اس تشدد میں اب تک 24 افردا ہلاک اور 350 زخمی ہوگئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بیرونی دورہ سے واپسی کے بعد وزیر اعظم نے ریاست میں قیام امن کیلئے جو اپیل کی ہے وہ قابل خیر مقدم ہے لیکن انہیں چاہئے تھا کہ وہ ریاست کو مزید افواج روانہ کرنے کی بجائے ڈاکٹرس اور ادویات روانہ کرتے تاکہ تشدد کے متاثرین کا علاج ہوسکے ۔ انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کو ایک بڑے انسانی سانحہ کا سامنا ہے اور ایسے میں انسانی پہلو پیش نظر رکھنے کی ضرورتہے تاکہ سازگار ماحول بن سکے نہ کہ غیر ضروری بہیمانہ طاقت استعمال کی جائے ۔ تمام مظاہرین نہتے ہیں۔ یوسف تریگامی نے کہا کہ چیف منسٹر محبوبہ مفتی نے تشدد کے دوران فائرنگ کے واقعات کی تحقیقات کروانے کا جو تیقن دیا ہے اسسے کشمیریوں کے زخم نہیں بھر سکتے ۔ انہیں کم سے کم اتنا کرنا چاہئے کہ وہ یہاں گولیوں کی بوچھار کو روک دیں۔ یہاں فائرنگ کے نتیجہ میں کئی افراد عملا بینائی سے محروم ہوچکے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کو چاہئے کہ وہ دواخانوں میں ڈاکٹرس اور ادویات کی دستیابی کو یقینی بنائیں تاکہ یہاں زخمیوں اور دیگر متاثرین کا موثر علاج ممکن ہوسکے ۔

TOPPOPULARRECENT