Saturday , December 16 2017
Home / شہر کی خبریں / کلیان لکشمی اسکیم سے بی سی طبقہ کے پسماندہ خاندان بھی استفادہ کے اہل

کلیان لکشمی اسکیم سے بی سی طبقہ کے پسماندہ خاندان بھی استفادہ کے اہل

شادی سے قبل رقم جاری کی جائے ، رہنمایانہ خطوط جاری کرنے چیف منسٹر کی ہدایت
حیدرآباد۔/16 جون، ( سیاست نیوز) حکومت نے ایس سی، ایس ٹی اور بی سی طبقات کیلئے شروع کی گئی کلیان لکشمی اسکیم کو بی سی طبقہ کے معاشی طور پر پسماندہ خاندانوں تک توسیع دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ اس سلسلہ میں رہنمایانہ خطوط جاری کریں۔ واضح رہے کہ اس اسکیم کے تحت شادی کیلئے 51 ہزار روپئے جاری کئے جاتے ہیں۔ ابتداء میں یہ اسکیم ایس سی، ایس ٹی طبقات کیلئے شروع کی گئی تاہم اسے بی سی طبقات تک توسیع دی گئی اور اب مزید رعایت دیتے ہوئے معاشی طور پر پسماندہ تمام خاندانوں کو امداد فراہم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ چیف منسٹر نے عہدیداروں سے کہا کہ شادی کیلئے امداد سے متعلق اسکیم کے چیک شادی سے قبل ہی جاری کردیئے جائیں۔ چیف منسٹر نے کہا کہ ملک کی کسی بھی ریاست میں یہ اپنی نوعیت کی منفرد اسکیم ہے اور ابھی تک ایک لاکھ خاندانوں کو امداد دی جاچکی ہے۔ اسکیم میں مزید رعایت سے معاشی طور پر پسماندہ خاندان استفادہ کرسکتے ہیں۔ چیف منسٹر نے کہا کہ اسکیم پر عمل آوری کیلئے درکار فنڈ حکومت جاری کرے گی۔ انہوں نے عہدیداروں سے کہا کہ لڑکی کی شادی سے قبل رقم کا چیک اس کی ماں کے حوالے کیا جائے اور عمل آوری میں مکمل شفافیت برتی جائے۔ انہوں نے کہا کہ شادی مبارک اور کلیان لکشمی اسکیم پر کامیابی سے عمل کرتے ہوئے ریکارڈ تعداد میں خاندانوں کو امداد دی گئی۔ 24 سپٹمبر 2014سے ان اسکیمات پر عمل آوری کی جارہی ہے اور ابھی تک 44,351 ایس سی، 25793 ایس ٹی اور 33913 اقلیتی خاندانوں کو امداد جاری کی گئی۔ ایک لاکھ 4ہزار 57 غریب لڑکیوں کی شادی کیلئے فی کس 51000 روپئے کے حساب سے 530 کروڑ روپئے جاری کئے گئے۔ جاریہ مالیاتی سال سے پسماندہ طبقات اور معاشی طور پر پسماندہ دیگر طبقات سے تعلق رکھنے والی لڑکیوں کی شادی کیلئے بھی امداد دی جائے گی۔ شادی مبارک اسکیم کے تحت 2016-17 میں محکمہ اقلیتی بہبود کو 150 کروڑ روپئے مختص کئے گئے اس کے علاوہ کلیان لکشمی کیلئے بہبودی سماجی بھلائی کو 200کروڑ، محکمہ قبائیلی بہبود کو 88کروڑ اور بہبودی پسماندہ طبقات کو 300کروڑ روپئے مختص کئے گئے۔ بجٹ میں مجموعی طور پر 738کروڑ روپئے منظور کئے گئے ہیں۔ غریب خاندانوں میں لڑکیوں کی شادی میں حائل مالی دشواریوں کے خاتمہ کیلئے حکومت نے اس اسکیم کا آغاز کیا ہے۔ چیف منسٹر نے کہا کہ بجٹ میں مختص کی گئی رقم کے علاوہ ضرورت پڑنے پر حکومت مزید رقم جاری کرنے کیلئے تیار ہے۔ واضح رہے کہ 2 اپریل سے بی سی اور ای بی سی طبقات کیلئے کلیان لکشمی اسکیم پر عمل کیا جارہا ہے۔ عہدیداروں نے معاشی طور پر پسماندہ خاندانوں کیلئے اسکیم سے استفادہ کیلئے رہنمایانہ خطوط ویب سائٹ پر رکھے ہیں اور آن لائن درخواستوں کے ادخال کے ذریعہ اسکیم سے استفادہ کیا جاسکتا ہے۔ واضح رہے کہ دونوں اسکیمات میں شہر اور اضلاع میں بعض بے قاعدگیوں کی شکایات ملی تھیں جس پر اینٹی کرپشن بیورو سے تحقیقات کا آغاز کیا گیا۔ بعض خاطی عہدیداروں اور درمیانی افراد کو گرفتار بھی کیا گیا۔ بتایا جاتا ہے کہ اینٹی کرپشن بیورو نے تحقیقات کا عمل جاری رکھا ہے۔

TOPPOPULARRECENT