Saturday , January 20 2018
Home / ہندوستان / کل ہند مسلم پرسنل لاء بورڈ اسکولی نصاب تعلیم میں گیتا کی شمولیت کیخلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہوگا

کل ہند مسلم پرسنل لاء بورڈ اسکولی نصاب تعلیم میں گیتا کی شمولیت کیخلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہوگا

لکھنو ۔ 8 جون ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) کل ہند مسلم پرسنل لاء بورڈ نے کہاکہ وہ بھگوت گیتا کی لازمی طورپر سوریہ نمسکار اور یوگا کے ساتھ اسکولی نصاب میں شمولیت کے حکومت کے فیصلہ کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہوگا ۔ ایک سرکاری بیان میں کہا گیا ہے کہ بورڈ کے ایک خصوصی اجلاس میں کل یہ فیصلہ کیا گیا کیونکہ اسلام میں صرف اﷲ کی عبادت کی اجازت ہے ، مسلم فرقہ کو یوگا ، سوریہ نمسکار اور بھگوت گیتا کے اسکولس میں لزوم پر سخت اعتراض ہے ۔ تمام طلبہ پر اسے مسلط نہیں کیا جانا چاہئے ۔ بورڈ کے ترجمان عبدالرحمن قریشی نے کہا کہ اجلاس میں ان فرقہ پرست طاقتوں کی تعلیم کو بھگوا رنگ دینے کی کوششوں پر سخت اظہارتشویش کیا ۔ بورڈ نے دھمکی دی ہے کہ ملک گیر سطح پر ایسے کسی بھی اقدام کے خلاف احتجاج کا آغاز کیا جائیگا ۔ مسلم پرسنل لاء کو ناکارہ قرار دینے پر ملت اسلامیہ خاموش نہیں رہے گی ۔ بیان کے بموجب اجلاس میں وزیراعظم نریندر مودی کی توجہ ان معاملات کی طرف مبذول کروائی گئی اور اُن سے درخواست کی گئی کہ ان سفارشات کو لاگو نہ کیا جائے۔

TOPPOPULARRECENT