Thursday , October 18 2018
Home / جرائم و حادثات / کمسن بچوں کی ڈرائیونگ کے خلاف مہم، 69 والدین کو سزا

کمسن بچوں کی ڈرائیونگ کے خلاف مہم، 69 والدین کو سزا

حیدرآباد۔ 11 مارچ (پی ٹی آئی) پولیس نے کہا ہے کہ شہر میں کمسن بچوں کی طرف سے گاڑیاں چلائے جانے کے خلاف بڑے پیمانے پر کارروائی کی گئی ہے اور گزشتہ ایک ماہ کے دوران بچوں کو گاڑی چلانے کی اجازت دینے والے 69 والدین کو جیل بھیج دیا گیا۔ ٹریفک پولیس کے ذمہ دار نے کہا کہ حیدرآباد میں 14 تا 16 سال کی عمر کے بچوں کی طرف سے گاڑی چلانے کے خلاف پولیس مہم کے دوران یہ حیرت انگیز انکشاف ہوا کہ کمسن بچے نہ صرف موٹر سائیکلس اور اسکوٹر چلاتے ہوئے پکڑے گئے بلکہ چند لڑکوں کو کار اور آٹو رکشا چلاتے ہوئے بھی پکڑا گیا جس کے بعد 69 بچوں کے والدین کو طلب کرتے ہوئے ایک تا تین دن کی سزا بھی دی گئی اور ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر جرمانہ بھی عائد کئے گئے۔ ڈی سی پی ٹریفک اے وی رنگناتھ نے کہا کہ حیدرآباد میں جنوری کے دوران پیش آئے مختلف سڑک حادثات میں پانچ کمسن بچے جو گاڑیاں چلا رہے تھے، ہلاک ہوگئے تھے جس کے بعد فروری کے پہلے ہفتہ سے ایسے کمسن لڑکوں کے خلاف مہم شروع کی گئی جو لائسنس کے بغیر گاڑیاں چلا رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ پہلے عدالتوں کے ذریعہ جرمانے عائد کئے گئے جس کے مطلوبہ نتائج برآمد نہیں ہوئے اور بالخصوص حالیہ سڑک حادثات کے بعد بڑے پیمانے پر سخت مہم شروع کی گئی تھی اور یہ مہم سال بھر جاری رہے گی۔

TOPPOPULARRECENT