Wednesday , December 19 2018

کنٹراکٹ ملازمین کی خدمات مستقل ، 50 ہزار نوجوانوں کو روزگار

( تاریخی قلعہ گولکنڈہ میں جشن آزادی کی رنگارنگ تقریب) کنٹراکٹ ملازمین کی خدمات مستقل ، 50 ہزار نوجوانوں کو روزگار وقف بورڈ کو جوڈیشل اختیارات کا تیقن ،گھر گھر سروے پروگرام پر اندیشے اور خدشات غیر ضروری ، چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ کا خطاب ٭ تاریخی قلعہ گولکنڈہ کی تعمیر فنون لطیفہ کا شاہکار

( تاریخی قلعہ گولکنڈہ میں جشن آزادی کی رنگارنگ تقریب)
کنٹراکٹ ملازمین کی خدمات مستقل ، 50 ہزار نوجوانوں کو روزگار
وقف بورڈ کو جوڈیشل اختیارات کا تیقن ،گھر گھر سروے پروگرام پر اندیشے اور خدشات غیر ضروری ، چیف منسٹر چندرا شیکھر راؤ کا خطاب
٭ تاریخی قلعہ گولکنڈہ کی تعمیر فنون لطیفہ کا شاہکار
٭ تلنگانہ کی ہمہ جہتی ترقی کیلئے قابل عمل پالیسیاں
٭ مسلمانوں کو 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے کوشاں
٭ مسلمانوں کی فلاح و بہبود کیلئے ایک ہزار کروڑ روپئے
٭ محکمہ پولیس میں 3600 ملازمین کا عنقریب تقرر
٭ حیدرآباد میں بہت جلد Wi-Fi سرویس کا آغاز
٭ حیدرآباد میں امن و ضبط کی برقراری اولین ترجیح
٭ صنعتی سٹی ، ایجوکیشن سٹی ،فلم سٹی بنانے اقدامات

حیدرآباد /15 اگست ( سیاست نیوز ) علحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل کے بعد پہلی مرتبہ تاریخی قلعہ گولکنڈہ میں آج 68 ویں یوم آزادی تقریب کا انتہائی شایان شان پیمانے و مثالی انداز میں انعقاد عمل میں آیا ۔ تلنگانہ ریاست کے پہلے چیف منسٹر مسٹر کے چندرا شیکھر راؤ نے اندرون قلعہ گولکنڈہ میں واقع رانی محل کے پاس قومی پرچم کشائی انجام دیں اور پرچم کشائی کے فوری بعد ترنگے رنگ کے غبارے چھوڑے گئے ۔ جس کی وجہ سے اس علاقہ کا پورا ماحول ترنگوں میں تبدیل ہوگیا ۔ اس موقع پر ڈپٹی چیف منسٹر مسٹر محمد محمود علی ریاستی وزراء مختلف شعبہ حیات کی معزز شخصیتیں سربرآوردہ اصحاب ارکان پارلیمان ، ارکان اسمبلی بشمول مجلس ارکان اسمبلی حکومت کے اعلی عہدیداروں اور عوام کی کثیر تعداد نے آج کی اس تاریخی و مثالی یوم آزادی تقریب میں شرکت کی ۔ اس موقع پر رنگارنگ تہذیبی پروگرامس بشمول شہری باجہ ، قوالی اور مجرا ڈانس پروگرام وغیرہ بھی پیش کئے گئے ۔ عوام نے ان تمام پروگرامس کی زبردست ستائش کی ۔ چیف منسٹر کے چندرا شیکھر راؤ نے قومی پرچم کشائی کے بعد تلنگانہ ریاست کے عوام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ علحدہ ریاست تلنگانہ میں قومی جھنڈا لہرانے پر انہیں کافی مسرت ہو رہی ہے اور کہا کہ تلنگانہ کی تاریخ کیلئے حیدرآباد ایک مثال ہے ۔ چیف منسٹر تلنگانہ نے گولکنڈہ کی تاریخی اہمیت کا تفصیلی تذکرہ کرتے ہوئے تاریخی قلعہ گولکنڈہ کی تعمیر سائنس و ٹیکنالوجی اور فنون لطیفہ کا ایک شہکار قرار دیا اور کہا کہ عالمی شہرت یافتہ کوہ نور ہیرا بھی گولکنڈہ میں دستیاب ہوا ۔ جس کے باعث قلعہ گولکنڈہ ہیروں کی تجارت کا مرکز کہلاتا تھا ۔ انہوں نے برطانوی پارلیمنٹ میں مہاتما گاندھی کے مجسمہ کی تنصیب پر مسرت کا اظہار کرتے ہوئے اسے ایک قابل ستائش اقدام قرار دیا۔ چیف منسٹر نے حصول علحدہ ریاست تلنگانہ کی ہمہ جہتی ترقی کے لئے حکومت کے پابند رہنے کا اظہار کیا اور کہا کہ منصوبہ بند ترقی، فلاح و بہبودی شعبہ جات میں قابل عمل پالیسیوں کے ذریعہ ترقی حاصل کرنے کی کوشش جاری رہے گی۔ علاوہ ازیں فلاح و بہبودی شعبوں میں جاری بے قاعدگیوں و بدعنوانیوں کا انسداد، حقیقی و اہل افراد تک حکومت کے فلاح و بہبودی پروگرامس و اسکیمات کو پہنچانے کے اقدامات کئے جائیں گے اور ان اقدامات کے ایک حصہ کے طورپر 19 اگست کو سارے تلنگانہ میں ہمہ مقصدی سروے پروگرام کا تذکرہ کیا اور کہا کہ یہ سروے ایک جامع سروے ہوگا اور اس سروے کے ذریعہ کسی کو نقصان پہنچانا حکومت کا ہرگز کوئی مقصد نہیں ہے۔ انھوں نے واضح طورپر کہا کہ ہمہ مقصدی سروے سے کسی کو پریشان و تشویش میں مبتلا ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ مسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے ہمہ مقصدی سروے کے تعلق سے بعض شرپسند طاقتوں کی جانب سے کئے جانے والے غلط پروپیگنڈوں کے خلاف سخت انتباہ دیا اور کہا کہ ہمہ مقصدی سروے کو کامیاب بنانے کے لئے ضلع انتظامیوں کی جانب سے بڑے پیمانے پر اقدامات کئے جا رہے ہیں، لہذا اس ہمہ مقصدی سروے کو کامیاب بنانے میں تلنگانہ عوام سے بھرپور تعاون کرنے کی خواہش کی۔ چیف منسٹر تلنگانہ نے اپنے انتخابی وعدوں کا تذکرہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ انتخابی وعدوں کو پورا کرنے کے پابند ہیں۔ انھوں نے کہا کہ وعدوں کے مطابق ہی مسلم اقلیت کو ان کی حکومت 12 فیصد تحفظات فراہم کرنے کے لئے کوشاں ہے اور تلنگانہ کے ریاستی بجٹ میں مسلم اقلیتوں کی فلاح و بہبود کیلئے ایک ہزار کروڑ روپئے مختص کئے جارہے ہیں ۔ علاوہ ازیں تلنگانہ میں اوقافی املاک کا تحفظ کرنے اور ان ا ملاک پر غیر مجاز قابضین کے خلاف سخت کارروائی کرنے کیلئے خصوصی وقف ٹریبونلس کا قیام عمل میں لایا جارہا ہے اور ان ٹریبونلس کو مکمل اختیارات دئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ وقف بورڈ کو مکمل جوڈیشل اختیارات دئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ اپنے ان وعدوں میں سے ایک دلت طبقات کو تین ایکڑ اراضی تقسیم اسکیم کو آج سے ہی شروع کیا جارہا ہے اور اس موقع پر مسٹر چندرا شیکھر راؤ نے دلت خواتین میں تین ایکڑ اراضیات دستاویزات فراہمی کے دستاویزات بھی حوالے کئے ۔ اس موقع پر چیف منسٹر نے رنگارنگ تقریب کے دوران عالمی سطح پر مقام حاصل کرنے تلنگانہ اور ملک کا نام روشن کرنے والے کھلاڑیوں کو تہنیت پیش کرکے ترغیبات کے طور پر رقومات کے چیکس بھی حوالے کئے ۔ انہوں نے کہا کہ عیسائی طبقات کی فلاح و بہبود پر اقدامات کئے جارہے ہیں اور انہیں درپیش مختلف مسائل کی بھی عاجلانہ یکسوئی کیلئے اقدامات کئے جارہے ہیں ۔ چیف منسٹر نے اس موقع پر قبائیلی و دلت لڑکیوں کی شادی کیلئے کلیان لکشمی ، اسکیم کا اعلان کیا اور کہا کہ اس اسکیم کے تحت ان دلت و قبائیل لڑکیوں کی شادیوں کیلئے 50 ہزار روپئے نقد فراہم کئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ پسماندہ طبقات کی فلاح و بہبود پر بھی اولین ترجیح دی جائے گی ۔ مسٹر چندر شیکھر راؤ نے کہاکہ علاقہ تلنگانہ کی ہمہ جہتی ترقی کیلئے موضع منڈل ضلع اور ریاستی اساس پر ترقیاتی منصوبہ جات مرتب کرکے تلنگانہ کی ترقی کو یقینی بنانے کے اقدامات کئے جائیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT