Friday , January 19 2018
Home / اضلاع کی خبریں / کورٹلہ حلقہ اسمبلی سے 12امیدواروں کی قسمت آزمائی

کورٹلہ حلقہ اسمبلی سے 12امیدواروں کی قسمت آزمائی

کورٹلہ ۔16اپریل ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) پرچہ نامزدگیوں کی دستبرداری کے بعد حلقہ اسمبلی کورٹلہ میں 12امیدوار انتخابی میدان میں ہیں ۔ اصل مقابلہ چار امیدواروں کے درمیان ہے ۔ کانگریس آئی پارٹی کے باغی امیدوار کی حیثیت سے مسٹر جواڈی نرسنگ راؤ کے انتخابی میدان میں موجودگی سے کانگریس آئی پارٹی کے امیداور مسٹر کومی ریڈی راملو کی کامیابی کے ا

کورٹلہ ۔16اپریل ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) پرچہ نامزدگیوں کی دستبرداری کے بعد حلقہ اسمبلی کورٹلہ میں 12امیدوار انتخابی میدان میں ہیں ۔ اصل مقابلہ چار امیدواروں کے درمیان ہے ۔ کانگریس آئی پارٹی کے باغی امیدوار کی حیثیت سے مسٹر جواڈی نرسنگ راؤ کے انتخابی میدان میں موجودگی سے کانگریس آئی پارٹی کے امیداور مسٹر کومی ریڈی راملو کی کامیابی کے امکانات مشکوک پائے جاتے ہیں ۔ کانگریس آئی پارٹی کی جانب سے مسٹر جواڈی نرسنگ راؤ کو انتخابی میدان سے دستبردار کروانے کی ہر ممکنہ کوشش کی گئی لیکن نرسنگ راؤ باغی کانگریس آئی امیدوار نے کانگریس ہائی کمان کے دباؤ میں نہ آتے ہوئے انتخابی میدان سے دستبردار ہونے سے انکار کردیا جبکہ بھارتیہ جنتا پارٹی کے باغی امیدوار مسٹر راگھو نے بھارتیہ جنتا پارٹی ہائی کمان کے حکم پر اپنا سرخم کرتے ہوئے انتخابی مقابلہ سے دستبرداری اختیار کی جبکہ آزاد امیدوار کی حیثیت سے پرچہ نامزدگی داخل کرنے والے مسٹر کڈیم مدھو ‘ مسٹر ٹائی کنڈہ وینکنا ‘ مسٹر آرمور پوچیا نے پرچہ نامزدگی سے دستبرداری اختیار کرلی۔ پرچہ نامزدگیوں سے دستبرداری کے بعد انتخابی میدان میں موجود 12امیدواروں کے نام یہ ہیں ۔ مسٹر کومی ریڈی راملو ( کانگریس ) ‘ مسٹر کلواکنٹلہ ودیا ساگر راؤ ( ٹی آر ایس ) ‘ مسٹر سورابی بھوم راؤ ( بھارتیہ جنتا پارٹی ) ‘ مسٹر اے سنتوش ریڈی ( وائی ایس آر کانگریس ) ‘ مسٹر برلہ لکشمن ( بی ایس پی ) ‘ مسٹر بھومانندم ‘ شریمتی کٹکم (عام آدمی پارٹی ) ‘مسٹر ایس گنگا راجم (جنتادل) ‘ مسٹر نریش ( شیوسینا) ‘ مسٹر جواڈی نرسنگ راؤ باغی کانگریس آئی امیدوار ‘ مسٹر محمد رشید آزاد ‘ مسٹر جی راما گوڑ آزاد امیدوار شامل ہیں ۔ آزاد امیدواروں کو انتخابی نشانات الاٹ کئے گئے ہیں ۔ جواڈی نرسنگ کو آٹو ‘ رشید خان کو انگور کے خوشے‘ گولہ پلی راما گوڑ کو الماری کا نشان الاٹ کیا گیا ہے ۔ حلقہ اسمبلی کورٹلہ میں اصل مقابلہ کومی ریڈی راملو کانگریس آئی ‘ کلواکنٹلہ ودیا ساگر راؤ ٹی آر ایس ‘ بھوم راؤ بی جے پی ‘ جواڈی نرسنگ راؤ کے درمیان ہے۔

حلقہ اسمبلی کورٹلہ میں چار منڈل کورٹلہ ‘ ملاپور ‘ ابراہیم پٹنم ‘ مٹ پلی شامل ہیں ۔ حلقہ اسمبلی کورٹلہ میں جملہ ووٹرس کی تعداد دو لاکھ سے زائد ہے ۔ حلقہ اسمبلی کورٹلہ منڈل ‘ مٹ پلی منڈل میں مسلم ووٹرس کی کثیر تعداد کے مدنظر کانگریس ‘ ٹی آر ایس ووٹرس کو اپنی جانب راغب کرنے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں ۔ مسلمان جو بادشاہ گر کا موقف رکھتے ہیں ۔ کانگریس پارٹی اقلیتوں کو بھارتیہ جنتا پارٹی کا خوف دلاکر اقلیتوں کے ووٹ حاصل کرنا چاہتی ہے جبکہ بھارتیہ جنتا پارٹی اقلیتوں ووٹوں کی تقسیم کا فائدہ اٹھاکر کامیابی حاصل کرناچاہتی ہے ۔ ٹی آر ایس امیدوار کلواکنٹلہ ودیا ساگر راؤ کی کامیابی کو یقینی بنانے کیلئے ٹی آر ایس قائدین و کارکن جی توڑ کوشش کررہے ہیں اور شہر کے سرکردہ شخصیتوں سے ملکر ٹی آر ایس پارٹی کی تائید حاصل کرنے کی کوشش کررہے ہیں جبکہ کومی ریڈی راملو کانگریس امیدوار جن کے لئے کوٹلہ منڈل کے ووٹرس نئے ہیں ۔ کورٹلہ منڈل میں اپنی پوزیشن مضبوط بنانے کیلئے جواڈی رتناکر راؤ سابق ریاستی وزیر کے گروپ کو اپنی جانب راغب کرنے کی کوشش کررہے ہیں ۔ کورٹلہ منڈل میں جواڈی نرسنگ راؤ کا موقف مضبوط دکھائی دے رہا ہے جبکہ ملاپور ‘ ابراہیم پٹنم ‘ مٹ پلی میں کلواکنٹلہ ودیا ساگر راؤ ٹی آر ایس ‘ سورابی بھوم راؤ بی جے پی‘ کومی ریڈی راملو کا کافی اثر و رسوخ ہے ۔

TOPPOPULARRECENT