Thursday , December 13 2018

کورٹلہ میں ضعیف شخص کے قتل کا معمہ حل

کورٹلہ ۔/24ڈسمبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کورٹلہ ٹاؤن کے حدود میں واقع کلوروروڈ پر آم کے باغ میں 10 اکٹوبر کو بی لنگپا 75سالہ ضعیف شخص کے قتل کیس کے معمہ کو کورٹلہ پولیس نے حل کرلیا۔ قبل ازیں اس موت کو حادثاتی موت سمجھا گیا تھا لیکن نعش کے مشتبہ حالت میں رہنے پر پولیس نے تحقیقات کرتے ہوئے اس قتل کے معمہ کو حل کرلیا۔ سرکل انسپکٹر پولیس کورٹل

کورٹلہ ۔/24ڈسمبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کورٹلہ ٹاؤن کے حدود میں واقع کلوروروڈ پر آم کے باغ میں 10 اکٹوبر کو بی لنگپا 75سالہ ضعیف شخص کے قتل کیس کے معمہ کو کورٹلہ پولیس نے حل کرلیا۔ قبل ازیں اس موت کو حادثاتی موت سمجھا گیا تھا لیکن نعش کے مشتبہ حالت میں رہنے پر پولیس نے تحقیقات کرتے ہوئے اس قتل کے معمہ کو حل کرلیا۔ سرکل انسپکٹر پولیس کورٹلہ سریندر، سب انسپکٹر پولیس جیش ریڈی نے اس واقعہ کی تفصیلات سے اخباری نمائندوں کو واقف کروایا۔ تفصیلات کے بموجب ضلع نظام آباد جوکل منڈل سوپور کے متوطن بی لنگیا جو گزشتہ چند سال سے کورٹلہ کے حدود میں واقع آم کے باغ کی دیکھ بھال کررہا تھا لنگیا اور قریبی رشتہ دار جوکل کے متوطن سبھاش مٹ پلی میں مقیم تھے۔ سبھاش نے ایک لڑکی سے ناجائز تعلقات استوار کرتے ہوئے اسے لنگیا کے گھر لے آیا جس پر لنگیا اور سبھاش کے درمیان کافی جھگڑا ہوا۔ اس واقعہ کو ذہن میں رکھتے ہوئے سبھاش نے مار پیٹ ماریپا کے لڑکے وی سائیلو کے ساتھ بی لنگیا کے قتل کا منصوبہ بنایا جبکہ جوکل میں رہنے والے قریبی رشتہ دار ماریپا سے اراضی کا تنازعہ چل رہا تھا۔ لنگیا کے قتل کے منصوبہ کو عملی جامہ پہنانے کیلئے 10اکٹوبر کی شام جبکہ لنگیا باغ میں اکیلا تھا۔

باغ میں لنگیا کے اکیلے رہنے کی اطلاع پاکر سائیلو اور سبھاش نے باغ جاکر ایک پتھر سے لنگیا کے سر اور سینہ پر وار کرنے سے لنگیا کی مقام واردات پر ہی موت واقع ہوگئی۔ اس واقعہ کے فوری بعد سائیلو اپنے گاؤں جوکل اور سبھاش اپنے رشتہ دار کے پاس چلا گیا۔ قبل ازیں لنگیا کی موت پتھر پر گرکر حادثاتی ہونے کا شک ظاہر کیا جارہا تھا لیکن نعش کے مشتبہ حالت میں پائے جانے پر قتل کا کیس درج کیا گیا۔ جناب سریندر سرکل انسپکٹر پولیس کورٹلہ کی زیر نگرانی گہرائی کے ساتھ تحقیقات کئے جانے پر لنگیا اور وی مارپا کے درمیان اراضی کا تنازعہ ہونے کا علم ہوا۔ سبھاش سے پوچھ تاچھ پر بی لنگیا کے قتل کا معاملہ کے حقائق منظر عام پر آئے۔ ملزم سبھاش کو بروز منگل پولیس نے حراست میں لے لیا اور دوسرے ملزم سائیلو کو جلد حراست میں لیا جائے گا۔ سرکل انسپکٹر پولیس کورٹلہ جناب سریندر نے یہ بات بتائی۔

TOPPOPULARRECENT